Sunday, November 28, 2021  | 22 Rabiulakhir, 1443

کرونا وائرس:عمران خان کا مکمل لاک ڈاؤن سے انکار

SAMAA | - Posted: Mar 28, 2021 | Last Updated: 8 months ago
SAMAA |
Posted: Mar 28, 2021 | Last Updated: 8 months ago

تیسری لہر بہت خطرناک ہے

وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ کرونا وائرس کے پھیلاؤ کے باوجود ہم ملک میں مکمل لاک ڈاؤن نہیں کرسکتے۔ کروناتیزی سے پھیلا تو ہمارے اسپتال دوبارہ بھرجائیں گے ۔ اس لئے عوام احتیاط کریں اورکرونا کو پھیلنےسےروکیں۔

اتوار کو کرونا سے متعلق اپنے خصوصی پیغام میں وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ کرونا سے بچاؤ کیلئے احتیاط بہت ضروری ہے اور تیسری لہر بہت خطرناک ہے۔ کرونا وائرس کی نئی قسم برطانیہ سے آئی ہے اور یہ بڑھ رہی ہے۔ لاہور،اسلام آباد اور پشاور میں کرونا کے کیسز تیزی سے بڑھ رہے ہیں۔

عمران خان نے کہا کہ پہلی لہر کے دوران پاکستان کے اقدامات کی دنیا نے مثال دی تاہم اب لوگ اس کی پروا نہیں کررہے ہیں۔ کرونا پھیلنے کی موجودہ رفتار کے پیش نظر انہوں نےخدشہ ظاہر کیا کہ اگر عوام کی جانب سے بےاحتیاطی کا سلسلہ اسی طرح چلتا رہا تو اسپتال بھرجائیں گے۔

لاک ڈاؤن سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ پاکستان ملک بند نہیں کرسکتا۔ ہمارے پاس وہ وسائل نہیں ہیں کہ ملک بند کرکے لوگوں کو کھانا دیں اور ان کا دھیان رکھیں۔پاکستان سے زیادہ امیر ترین ممالک کے پاس بھی اتنے وسائل نہیں ہیں کہ لوگوں کو گھر بیٹھے کھانا کھلا سکیں۔ تاہم ایس او پیز پر مکمل عمل درآمد ضروری ہے۔

کرونا ویکسین سے متعلق انھوں نے کہا کہ دنیا میں اس کی قلت ہوگئی ہے اور جن لوگوں نے پاکستان کو ویکسین دینے کا کہا تھا وہ بھی اس وقت اپنا وعدہ پورا کرنے سے قاصر ہیں۔ انھوں  نے تجویزدی کہ بہتر یہ ہے کہ ابھی سے ایس او پیز پر عمل کریں۔

انھوں نے کہا کہ کوئی ایسی جگہ پر نہ جائیں جہاں سے کرونا تیزی سے پھیلتا ہے۔ ان میں شادی کی تقریبات اور ریسٹورنٹس شامل ہیں۔ کاروبار اور فیکٹریاں بند نہیں کرسکتے لیکن احتیاط لازمی ہے۔

اسکول بند کرنے کا فیصلہ مشکل ہے،شفقت محمود

اپنےمتعلق انھوں نے بتایا کہ کرونا وائرس کی پہلی اور دوسری لہر کے دوران مسلسل ماسک پہننا اور وبا سے محفوظ رہا تاہم سینیٹ الیکشن میں احتیاط نہ کرنےسےوباکاشکارہوا۔

اس سے قبل معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان نے کہا کہ کرونا کی موجودہ لہر پہلی لہر سے زیادہ خطرناک ہے۔ رش والی جگہوں پر جانا کوئی فخر کی بات نہیں ہے۔ ماسک پہنیں،احتیاط کریں اور دوسروں کو بھی آگاہی دیں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube