کوئٹہ میں خاتون اسسٹنٹ کمشنرکا ایک ماہ میں 4بار تبادلہ

SAMAA | - Posted: Mar 20, 2021 | Last Updated: 2 months ago
Posted: Mar 20, 2021 | Last Updated: 2 months ago

فوٹو: ٹویٹر

کوئٹہ میں خاتون اسسٹنٹ کمشنر کا ایک ماہ میں 4 مرتبہ تبادلہ ہونے کے بعد بلوچستان رول آف بزنس پر سوالات اٹھنے لگے۔ ترجمان بلوچستان حکومت لیاقت شاہوانی کہتے ہیں کہ خاتون افسر کے ساتھ زیادتی نہیں ہوئی، ٹرانسفر پوسٹنگ نوکری کا حصہ ہے۔

بلوچستان رولز آف بزنس 2012ء نظر انداز، گریڈ 17 کی خاتون آفیسر فریدہ ترین کا تقریباً ایک ماہ کے عرصے میں 4 مرتبہ تبادلہ کر دیا گیا۔

چیف سیکریٹری آفس میں تعینات قائمقام ڈپٹی سیکریٹری اسٹاف فریدہ ترین کا پہلا تبادلہ 11 فروری کو بطور اسسٹنٹ کمشنر کوئٹہ کیا گیا، 16 فروری، 25 فروری اور 16 مارچ کو مزید 3 مرتبہ تبادلہ کرتے ہوئے فریدہ ترین کو محکمہ ایس اینڈ جی اے ڈی اور صنعت میں سیکشن افسر تعینات کیا گیا۔

قانونی طور پر بلوچستان رولز آف بزنس 2012ء کے تحت چیف سیکریٹری سے سیکشن افسر تک تعیناتی کی مدت تین سال ہے۔

ترجمان بلوچستان حکومت لیاقت شاہوانی کہتے ہیں کہ خاتون افسر کے ساتھ کوئی زیادتی نہیں ہوئی، تقرر و تبادلے ملازمت کا حصہ ہیں۔

خاتون افسر کے مسلسل تبادلوں کے بعد سوشل میڈیا پر بلوچستان حکومت پر کڑی تنقید کی جارہی ہے۔ سوشل صارفین کہتے ہیں کہ خاتون افسر کو ان کا جائز حق دیا جائے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube