کراچی:بینک ڈکیتی کےدوران 2سیکورٹی گارڈز زخمی

SAMAA | - Posted: Mar 17, 2021 | Last Updated: 3 months ago
SAMAA |
Posted: Mar 17, 2021 | Last Updated: 3 months ago

عملے کو یرغمال بنایا

کراچی میں بینک ڈکیتی کی واردات میں 10 لاکھ روپے سے زائد رقم لوٹ لی گئی۔

بدھ کی صبح کراچی کےعلاقے نارتھ کراچی دومنٹ چورنگی کے قریب بینک ميں ڈکیتی کی واردات ہوئی۔پولیس کے مطابق شلوارقمیض میں ملبوس 4 ڈاکو بینک کےاندرداخل ہوئےاور عملے کو یرغمال بنایا۔

اس دوران ڈاکوؤں نےبینک کےاندرگھستے ہی2فائر بھی کیے۔ ملزمان نےمزاحمت پر 2 سيکيورٹی گارڈزکوبٹ مارکرزخمی کردیاجن کی شناخت خیال خان اور شیر علی کے نام سے ہوئی ہے۔ واردات کے وقت بینک میں2سیکیورٹی گارڈزتعینات تھے۔

پولیس نےبتایا کہ بینک ڈکیتی کےدوران 10 لاکھ 35ہزارروپے کی رقم لوٹی گئی۔ ڈاکوؤں نے شناخت چھپانے کےلیےچہرے پر ماسک لگائے ہوئے تھے اور فرار ہوتے ہوئے بھی انھوں نے ہوائی فائرنگ کی۔

آئی جی سندھ نے نارتھ کراچی ميں بينک ڈکيتی کا نوٹس لیتےہوئےمتعلقہ حکام سےتفتیش اورتحقیقات پرمشتمل رپورٹس طلب کرلی ہیں۔

ایس ایس پی سینٹرل ملک مرتضیٰ نے بتایا کہ ملزمان کا15 کے پولیس اہلکاروں سےمقابلہ بھی ہوا۔ اس دوران ملزمان اپنی موٹرسائیکل چھوڑکر شہری کی بائیک لےگئے۔ایس ایس پی سینٹرل کا کہنا تھا کہ بينکوں کےاندرگارڈزکوچھوٹےہتھیاردینےکیلئےبات کریں گے۔

ایس ایس پی ایس آئی یو حیدررضا نے بتایا کہ نیوکراچی میں واردات کرنے والا نیا گروپ لگتا ہےاوراس واقعے کی سی سی ٹی وی فوٹیج مل گئی ہے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube