Wednesday, October 20, 2021  | 13 Rabiulawal, 1443

پشاور: ریپ کے مجرم کو سزائے موت

SAMAA | - Posted: Mar 13, 2021 | Last Updated: 7 months ago
SAMAA |
Posted: Mar 13, 2021 | Last Updated: 7 months ago

چائلڈ پروٹیکشن کورٹ پشاور نے پشاور میں 7سالہ بچی سے ریپ کے مجرم کو ایک لاکھ روپے جرمانہ اور سزائے موت سنادی۔

 کورٹ کا کہنا ہے کہ میڈیکل رپورٹ میں ملزم پر بچی سے زیادتی کا الزام ثابت ہوا ہے۔

دوسری جانب خیبرپختونخوا (کے پی) حکومت نے بچوں سے زیادتی کی روک تھام کیلیے ترمیمی بل کا ڈرافٹ تیار کرلیا تھا جس میں بچوں سے زیادتی کے مجرم کو سزائے موت یا عمر قید کی سزا تجویز کی گئی تھی۔

بل کے مسودہ کے مطابق سزائے موت سے قبل ریکارڈ ویڈیو منظوری کے بعد پبلک کی جائے گی، عمرقید کی سزا پانے والا مجرم طبعی موت تک جیل میں رہے گا۔

مسودے میں کہا گیا تھا کہ عمر قید پانے والے قیدیوں کو پیرول پر رہا نہیں کیا جائے گا، بچوں سے زیادتی کے مرتکب افراد کی سزا میں حکومت معافی نہیں دے سکے گی۔

ترمیمی بل میں مزید کہا گیا ہے کہ بچوں کی غیراخلاقی ویڈیو بنانے پر 14سال قید با مشقت اور 5لاکھ روپےجرمانہ جبکہ بچوں کو بدکاری کی جانب راغب کرنے پر 10سال قید بامشقت کی سزا تجویز کی گئی تھی۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube