سینیٹ میں پیسہ نہیں ن لیگ کاٹکٹ چلاہے، مریم نواز

SAMAA | - Posted: Mar 4, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Mar 4, 2021 | Last Updated: 2 months ago

کل تک جوایم این ایز سےملتا نہیں تھا آج کھانے کھلا رہا تھا

مریم نواز نے کہا ہے کہ سینیٹ میں پیسہ نہیں، مسلم لیگ ن کا ٹکٹ چلا ہے۔ لوگ بکے نہیں۔ اس حکومت نے ارکان اسمبلی کو مہنگائی اور بدنامی کے سوا دیا کیا ہے۔

اسلام آباد میں ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے مریم نواز نے کہا کہ نوازشریف کے بیانیہ کا بوجھ بھاری تھا مگر کارکنوں نے وہ بوجھ اٹھایا اور آج  اس بیانیے کا ڈنکا پورے پاکستان میں بج رہا ہے۔ ملک کا ہر طبقہ نوازشریف کے بیانیے کا قائل ہوگیا ہے۔ ن لیگ کے تمام ایم این ایز نے سینیٹ الیکشن میں نوازشریف کے ہدایت پر  لبیک کہا۔ لوگ عمران خان کو بددعائیں دے رہے ہیں اور نواز شریف کے واپسی کے لیے دعاگو ہیں۔

مریم نواز نے کہا کہ ضمنی الیکشن میں ثابت ہوگیا کہ ن لیگی کارکن جاگ گیا ہے۔ ضمنی الیکشن میں سازش کے تحت ووٹنگ کو سست رکھا گیا مگر جیت پھر بھی ن لیگ کے ہوئی۔ ہم نے نوشہرہ میں مخالفین کو گھر میں گھس کر مارا ہے۔ لیگی کارکن آپ کو عوام کے ووٹوں اور جیبوں پرڈاکا ڈالنے نہیں دیں گے۔

انہوں نے کہا کہ ملک کا سیاسی منظرنامہ بدلنے کا کریڈٹ نوازشریف کو جاتا ہے نواز شریف نے لندن بیٹھ کر طاقت کے ایوانوں کو ہلاکر رکھ دیا ہے۔ آج ان کو کہنا پڑ رہا ہے کہ ہمیں سیاست میں مت گھسیٹٰں۔

مریم نواز نے کہا کہ الیکشن ہارنے کے بعد جھکے ہوئے سروں کے ساتھ کہا کہ الیکشن میں پیسہ چلا۔ کیا چاروں صوبوں میں بھی پیسہ چلا؟ پیسہ نہیں چلا، ن لیگ کی ٹکٹ چلا ہے۔ کہتے ہی لوگ بک گئے۔ لوگ بکے نہیں، آپ نے ارکان اسمبلی کو مہنگائی اور بدنامی کے سوا دیا کیا ہے۔ تین سال جن کو نہیں ملے، ان کی منتیں کی گئی کے مجھے ووٹ دے دینا۔

انہوں نے کہا کہ ہارنے کے ڈر سے سپریم کورٹ کو گھسیٹا گیا۔ ان کو پتہ تھا ریت ہاتھوں میں سے پھسل گئی ہے۔ نواز شریف جیت گیا تم ہار گئے۔ تمہارا یہ حال ہے کہ اپنے بل بوتے پر ایک سینیٹ سیٹ نہیں جیت سکتے۔

مریم نواز نے کہا کہ ہارنے کے بعد اچانک تمہیں جمہوریت یاد آگئی ہے ۔2018 الیکشن چوری کے وقت آپ کو جمہوریت یاد نہیں آئی۔ بلوچستان میں ن لیگ کی حکومت ختم کی گئی، اس وقت جمہوریت یاد نہیں آئی۔ چیئرمین سینیٹ کے انتخاب کے وقت جمہویت یاد نہیں آئی۔ سلیکٹر کے ساتھ مل کر عوام کے مینڈیٹ پر ڈاکا ڈالتے ہو اور پھر جمہوریت کا رونا روتے ہو۔ کل سے کہ رہے ووٹ کو عزت دو، تمہیں نوازشریف کا بیانیہ یاد آگیا۔ تمہیں اب الیکشن چوری پر معافی مانگنی پڑے گی۔ جن کو کہتے ہو بک گئے، اب ان سے اعتماد کا ووٹ مانگتے ہو، تمہیں صرف قومی اسمبلی میں چاروں صوبوں میں شکست ہوئی ہے۔ عوام کا اعتماد کیسے حاصل کروگے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube