ویڈیواسکینڈل کی تحقيقات کےليے پی ٹی آئی کی کمیٹی قائم

SAMAA | - Posted: Feb 11, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Feb 11, 2021 | Last Updated: 2 months ago

ویڈیواسکینڈل پرتحقيقات کے ليے وزیراعظم نےفواد چوہدری،شہزاد اکبر اور شیریں مزاری پرمشتمل کميٹی قائم کردی ہے۔

کمیٹی ویڈیو اسکینڈل کےحوالےسےتمام امور کی تحقیقات کرے گی جس کے بعدکمیٹی اپنی سفارشات ایک ماہ کے اندروزیراعظم کوپیش کرےگی۔

دودن قبل اے آروائی نیوز نے ایک ویڈیو نشر کی تھی جس میں دیکھا جاسکتا ہے تحریک انصاف کے سابق ارکان اسمبلی بیگوں میں نوٹوں کی گڈیاں بھر رہے ہیں۔ ان ارکان پر 2018 کے سینیٹ انتخابات میں ووٹ فروخت کرنے کا الزام ہے۔

ویڈیو میں نظر آنے والے ایک سابق ایم پی اے عبیداللہ مایار نے انکشاف کیا کہ تحریک انصاف نے دوسری پارٹیوں سے لوگوں کو بلاکر بھاری رقم کے عوض انہیں سینیٹ کے ٹکٹ دیے۔ پھر وہی رقم پرویز خٹک کے کہنے پر اسپیکر ہاؤس میں ارکان اسمبلی کو دی گئی اور اس کی ویڈیو بھی بنائی گئی۔

پرویزخٹک کےکہنےپرووٹ فروخت کیا،ارکان کااعتراف

 سماء ٹی وی کے پروگرام ندیم ملک لائیو میں گفتگو کرتے ہوئے ویڈیومیں نظر آنے والے عبیداللہ مایار نے کہا کہ یہ ویڈیو بالکل ٹھیک ہے مگر پیسوں کی تعداد غلط بتائی گئی۔ اس میں ہر ایم پی اے کو ایک کروڑ روپے دیے گئے۔ یہ حکومت کے پیسے تھے اور وزیراعلیٰ پرویز خٹک کے کہنے پر اسپیکر ہاؤس میں تقسیم کیے گئے۔

پرویز خٹک کاعبیداللہ مایارکےالزامات پرردعمل

وزير دفاع پرويز خٹک نے عبيداللہ مايار کے الزامات مسترد کرتےہوئے کہا کہ مجھےتوکچھ پتہ ہی نہيں،سارا معاملہ محمد علی شاہ کے ذريعے طے ہوا، وہی شناخت کر رہے تھے،ميں نےکسی کو رقم دينےکونہيں کہا اور نہ ہی لينے کی ہدايت دی۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube