پیپلزپارٹی کااوپن بیلٹ سے متعلق صدارتی آرڈیننس چیلنج کرنیکا فیصلہ

SAMAA | - Posted: Feb 8, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Feb 8, 2021 | Last Updated: 2 months ago

حکومت سینیٹ انتخابات میں بھی دھاندلی چاہتی ہے، بلاول بھٹوزرداری

بلاول بھٹو زرداری نے اوپن بیلٹ سے متعلق صدارتی آرڈیننس کو چیلنج کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت سینیٹ انتخابات میں بھی دھاندلی چاہتی ہے، ان کی سازش کامیاب نہیں ہونے دیں گے، امید ہے عدالت اوپن بیلٹ کی اجازت نہیں دیگی۔

چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری اور پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کے درمیان کراچی میں ملاقات ہوئی، جس میں صوبائی وزراء سعید غنی اور ناصر حسین شاہ بھی موجود تھے، ملاقات میں سیاسی صورتحال اور حکومت مخالف مہم سمیت سینیٹ انتخابات کے حوالے سے بھی بات چیت ہوئی۔

چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری نے ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ حکومت پارلیمںٹ کو متنازع بنارہی ہے، وہ سینیٹ انتخابات میں بھی دھاندلی چاہتے ہیں، حکومت صاف وشفاف الیکشن نہیں چاہتی، حکومت کی نیت خراب ہے، ان کے ایم این ایز ناراض ہیں، حکومت کو امید تھی سینیٹ میں ان کا مقابلہ نہیں کیا جائے گا۔

انہوں نے اوپن بیلٹ سے متعلق صدارتی آرڈیننس کو چیلنج کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ حکومت کی سازش کامیاب نہیں ہوگی، حکومت کی سازش کامیاب ہوئی تو الیکشن پر بڑا حملہ ہوگا، اُمید ہے کہ عدالت اوپن بیلٹ کی اجازت نہیں دے گی، سپریم کورٹ آئین و قانون کے مطابق فیصلہ کرے گی۔ بلاول نے دعویٰ کیا کہ حکومتی ممبران ان کیخلاف اوپن ووٹ دینے کیلئے تیار ہیں، پی ڈی ایم انہیں اوپن بیلٹ پر بھی ٹم ٹائم دیگی۔

حکومت کیخلاف مارچ سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ 26 مارچ کیلئے پوری تیاری کرلی گئی ہے،اسلام آباد جائیں یا راولپنڈی اس بات پر مشاورت کی گئی تھی، راولپنڈی پہنچنے سے پہلے ہی ہماری طاقت سب کو نظر آجائے گی۔

اپوزیشن کی 11 جماعتوں کے اتحاد پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ نے پاکستان تحریک انصاف حکومت کیخلاف 26 مارچ کو اسلام آباد کی جانب لانگ مارچ کا اعلان کررکھا ہے، جس میں پاکستان پیپلزپارٹی، مسلم لیگ نواز، جمعیت علمائے اسلام (ف)، عوامی نیشنل پارٹی، پشتونخواہ میپ، بلوچستان نیشنل پارٹی (مینگل) سمیت دیگر جماعتیں شامل ہیں۔

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ ڈی جی آئی ایس پی آر سے متفق ہوں، میرابھی یہی مقصد ہے کہ فوج کا سیاست میں کردار نہیں ہونا چاہئے، ہمارا مطالبہ ہے کہ اسٹیبلشمنٹ سیاست میں حصہ نہ ڈالے۔

پاک فوج کے ترجمان میجر جنرل بابر افتخار نے آج سماء ٹی وی سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے ایک بار پھر واضح کیا تھا کہ افواج پاکستان کا سیاست سے کوئی تعلق نہیں ہے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube