Saturday, October 16, 2021  | 9 Rabiulawal, 1443

فیصل آباد: 13سالہ ملازمہ پر تشدد، سابق ناظم گرفتار

SAMAA | - Posted: Jan 25, 2021 | Last Updated: 9 months ago
SAMAA |
Posted: Jan 25, 2021 | Last Updated: 9 months ago

FSD child abuse

فیصل آباد ميں برتن ٹوٹنے پر 13 سالہ ملازمہ پر تشدد کرنے کے الزام میں سابق ناظم کو گرفتار کر لیا گیا۔

بٹالہ کالونی پولیس سابق ناظم عثمان منج اور اسکی اہلیہ اسماء منج کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے۔ ایف آئی آر کے مطابق بچی پر گزشتہ 6 ماہ سے تشدد کیا جا رہا تھا۔

پیپلز کالونی میں 24 جنوری کو بچی تشدد کے باعث گھر سے بھاگ گئی تھی۔ اسکے بعد بچی کو چائلڈ پروٹیکشن کے حوالے کيا گيا۔

چائلڈ پرٹیکشن بیورو کی افسر روبینہ اقبال نے ایف آئی آر درج کروائی تھی، جس کے مطابق بچی کے جسم پر تشدد کے نشانات موجود ہیں۔ بچی کا دعویٰ ہے کہ اسے 6 ماہ تک تشدد تک نشانہ بنایا گیا اور اسے ماہانہ 5ہزار روپے ادا کیے جاتے ہیں۔

میاں بیوی کے خلاف پاکستان پینل کوڈ کی دفعہ اے 328 (بچوں کے ساتھ ظلم) اور 337 ایل (دوسرے زخمی ہونے کی سزا) اور پنجاب ڈس ایسوٹ اینڈ نیگلیکٹڈ چلڈرن ایکٹ 2004 کی دفعہ 34 (غیر مجاز تحویل) کے تحت مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

ان دفعات کے تحت سزا یافتہ افراد کو 3 سال قید کی سزا ہوسکتی ہے اور ان پر 25ہزار سے 50ہزار روپے تک جرمانہ عائد کیا جاسکتا ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube