شیخ رشیدکی فضل الرحمان کوختم نبوت پراکٹھے جلسہ کرنےکی پیشکش

SAMAA | - Posted: Jan 24, 2021 | Last Updated: 5 months ago
SAMAA |
Posted: Jan 24, 2021 | Last Updated: 5 months ago

اسرائیل کو تسلیم کرنے کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا

وفاقی وزير داخلہ شيخ رشيد احمد نے مولانا فضل الرحمان کو ختم نبوت کے معاملے پر اکٹھے جلسہ کرنے کی پيش کش کر دی۔

راولپنڈی میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے شیخ رشید نے پیش کش کی کہ مولانا صاحب! ختم نبوت پر اکھٹے جلسہ کرتے ہيں۔ اسرائيل کو تسليم کرنے کا سوال ہی پيدا نہيں ہوتا۔

انہوں نے کہا کہ فضل الرحمان آئیں ایک ساتھ اسرائیل کے خلاف اور مقبوضہ کشمیر کی آزادی کے لیے جلسہ کریں۔

شیخ رشید نے کہا کہ فضل الرحمان سياست کے ليے مدرسوں کے بچوں کو استعمال کرتے ہيں۔ مجھے ن ليگ اور پيپلزپارٹی کی فکر نہيں ہے لیکن مجھے مولانا کی فکر ہے کیونکہ وہ بند گلی ميں جا رہے ہيں۔

شیخ رشیدکی باتوں کو جوتےکی نوک پررکھتے ہیں، غفور حیدری

انہوں نے کہا کہ فضل الرحمٰن اور غفور حیدری نے کراچی میں جو کہا معاف کرتا ہوں۔ اپوزیشن الیکشن کمیشن احتجاج کی طرح آئی تو رکاوٹ نہیں ہوگی۔

شیخ رشید کا کہنا تھا کہ لاہورجلسے اور الیکشن کمیشن احتجاج کے بعد آپ ایکسپوز ہوگئے ہیں۔ آپ کو کچھ نہیں ملے گا اور عمران خان 5 سال پورے کر جائے گا۔ آپ سینیٹ کے انتخابات میں حصہ لے رہے ہیں، استعفے نہیں دے رہے۔

وفاقی وزير داخلہ کا کہنا تھا کہ فضل الرحمان جس اسمبلی کو لعنت دیتے ہیں اسی میں صدر کے امیدوار تھے۔

واضح رہے کہ 19 جنوری کو جمعیت علمائے اسلام (ف) کے رہنماء عبدالغفور حيدری نے حکومت پر راستے بند کرنے کا الزام لگاتے ہوئے کہا تھا کہ ’’شيخ رشيد بکواس کرتے ہيں اور ان کی بکواس کو جوتے کی نوک پر رکھتے ہيں‘‘۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube