Saturday, June 12, 2021  | 1 ZUL-QAADAH, 1442

نامعلوم ’مداخلت‘ پر بی بی سی نے سیربین بند کردیا

SAMAA | - Posted: Jan 16, 2021 | Last Updated: 5 months ago
SAMAA |
Posted: Jan 16, 2021 | Last Updated: 5 months ago

File Photo/BBC

برطانوی نشریاتی ادارے نے ’نامعلوم مداخلت‘ پر بی بی سی اردو کے پروگرام ’سیربین‘ کو پاکستانی ٹی وی چینل ‘آج نیوز’ پر نشر کرنے کا سلسلہ ختم کر دیا ہے۔

بی بی سی کی جانب سے جاری پریس ریلیز کے مطابق ’حالات حاضرہ کا پروگرام ’سیربین‘ جو پاکستان کے ٹیلی ویژن چینل آج نیوز سے نشر ہوتا تھا، اب اُس کی نشریات ‘آج نیوز‘ پر بند کر دی گئی ہیں مگر ‘سیربین’ بی بی سی اردو ڈاٹ کام، بی بی سی اردو فیس بک پیچ اور بی بی سی اردو کے یوٹیوب چینل پر سوموار سے جمعہ تک پاکستانی وقت کے مطابق شام سات بجے نشر ہوا کرے گا۔‘

بی بی سی ورلڈ سروس کے ڈائریکٹر جیمی اینگس نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ‘ہم اکتوبر 2020 اکتوبر سے اپنے نیوز بلیٹنز میں مداخلت دیکھ رہے تھے اور ہم نے ‘آج ٹی وی’ کو پروگرام کو دوبارہ آن ایئر کرنے کے لیے مناسب وقت دیا تھا۔’

انہوں نے کہا کہ ‘ہمارے پروگراموں میں کسی قسم کی مداخلت ہمارے اور ہمارے ناظرین کے درمیان اعتماد کی خلاف ورزی ہے، جس کی ہم اجازت نہیں دے سکتے۔’

جیمی اینگس کے مطابق ’مداخلت جاری رہنے کی وجہ سے دونوں جانب سے نیک نیتی سے کی جانے والی کوششوں کے باوجود بی بی سی سیربین کی نشریات کو شروع نہیں کیا جا سکا ہے۔ لہذا اب بی بی سی کے پاس اس کے سوا کوئی چارہ نہیں کہ وہ آج ٹی وی سے اپنی شراکت کو فوری طور پر ختم کر دے۔

جیمی اینگس نے کہا کہ ‘بی بی سی کو پاکستان میں اپنی نشریات کے ختم ہونے کا افسوس ہے لیکن بی بی سی کے ناظرین اب بھی بی بی سی اردو کا ٹی وی پروگرام ’سیربین‘ بی بی سی اردو ڈاٹ کام، بی بی سی اردو فیس بک پیچ اور بی بی سی اردو کے یوٹیوب چینل پرسوموار سے جمعہ تک پاکستانی وقت کے مطابق شام سات بجے پروگرام دیکھ سکتے ہیں۔‘

بی بی سی اردو نے پاکستان کے نجی چینل ‘آج’ ٹی وی کے ساتھ 2014 میں شراکت داری کے معاہدے کی بنیاد پر اپنے پروگرام ‘سیربین’ کی نشریات شروع کی تھیں۔ اس معاہدے کے تحت بی بی سی مقامی زبان اور مقامی آڈینس کے لحاظ سے اپنا پروگرام آزادانہ ادارتی پالیسی کے تحت تشکیل دیتا ہے اور مقامی ٹی وی چینل اُس پروگرام کو نشر کرتا ہے۔

اس قسم کے شراکتی معاہدے بی بی سی نے دیگر ممالک کے نجی چینلوں کے ساتھ بھی کیے ہوئے ہیں لیکن ہر معاہدے میں ادارتی اختیار بی بی سی کے پاس ہی موجود رہتا ہے۔

بی بی سی کی پریس ریلیز میں یہ واضح کیا کہ آج نیوز نے بھی نیک نیتی کے ساتھ پروگرام چلانے کی کوشش کی مگر مداخلت نہ رک سکی۔ اس بیان میں ظاہر نہیں کیا گیا کہ ان کے پروگرام میں کون مداخلت کرتا رہا ہے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube