Thursday, March 4, 2021  | 19 Rajab, 1442
ہوم   > پاکستان

چائلڈ پورنوگرافی میں ملوث 3گروپوں کاصفایا کردیا، ایف آئی اے

SAMAA | - Posted: Jan 11, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Jan 11, 2021 | Last Updated: 2 months ago

Child abuse Depression-TrinetteLucas-option 2-Sept 9

ایف آئی اے سائبر کرائم نے خصوصی کارروائی میں چائلڈ پورنوگراف / بچوں کے استحصال میں ملوث 3 گروپوں کا صفایا کردیا، سال 2020ء میں 24 مقدمات درج کرکے 26 افراد کو گرفتار کرلیا۔ ادارے نے گزشتہ سال مختلف معاملات کی مجموعی طور پر ایک لاکھ شکایات نمٹادی گئیں۔

ایف آئی اے سائبر کرائم کی جانب سے جاری اعلامیے کے مطابق سال 2020ء غیر معمولی طور پر چیلنجنگ رہا، گزشتہ سال پچھلے سالوں کے مقابلے میں 5 گنا زیادہ شکایات کا اندراج ہوا، ادارے نے تقریباً ایک لاکھ شکایات کا ازالہ کردیا۔

اعداد و شمار کے مطابق سال 2020ء میں مجموعی طور پر 94 ہزار 227 شکایات درج کرائی گئیں، جن میں مالی دھوکہ دہی، ہراسانی، سوشل میڈیا اسٹاکنگ اور اکاؤنٹس میں غیر مجاز رسائی شامل ہیں۔

ایف آئی اے سائبر کرائم نے مالیاتی جرائم، ہراسانی، بدنام کرنے، خواتین کو ہراساں کرنے، چائلڈ پورنو گرافی اور ہائی پروفائل کیسز کیلئے اسپیشلائزڈ انویسٹی گیشن یونٹس قائم کئے، جنہوں نے کامیابی سے 9 ہزار 73 انکوائریز (پچھلے سال کے مقابلے میں 50 فیصد زیادہ) اور 374 مقدمات (پچھلے سال سے 100 فیصد زائد) نمٹادیئے۔

ایف آئی اے نے سال 2020ء میں بچوں کے استحصال کیخلاف خصوصی مہم شروع کی، اس دوران چائلڈ پورنو گرافی / بچوں کے استحصال میں ملوث 3 گروپوں کا صفایا کرکے 26 افراد کو گرفتار کیا گیا اور 24 مقدمات درج کرائے گئے۔

اعلامیے میں بتایا گیا ہے کہ جرائم میں ملوث گروپوں کیخلاف آپریشن میں 621 ملزمان اور 22 گروپوں کو گرفتار کیا گیا، 20 ہزار سے زائد مختلف آلات بھی برآمد کرلئے گئے، بینظیر انکم سپورٹ پروگرام میں فراڈ کرنے والے 22 افراد کو گرفتار کرکے 40 لاکھ روپے برآمد کی گئی اور 16 مقدمات درج کرلئے گئے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube