Friday, October 15, 2021  | 8 Rabiulawal, 1443

علامہ خادم حسین رضوی انتقال کرگئے

SAMAA | - Posted: Nov 19, 2020 | Last Updated: 11 months ago
SAMAA |
Posted: Nov 19, 2020 | Last Updated: 11 months ago

مذہبی و سیاسی جماعت تحریک لبیک پاکستان کے بانی علامہ خادم حسین رضوی انتقال کر گئے، وہ کافی عرصہ سے علیل تھے۔

ترجمان تحریک لبیک پاکستان کے مطابق علامہ خادم حسین رضوی طویل عرصہ سے علیل تھے، جو آج لاہور میں انتقال کر گئے۔

علامہ خادم حسین رضوی کے صاحبزادے نے بھی ان کے انتقال کی تصدیق کردی۔

تحریک لبیک پاکستان نے چند روز قبل فرانس میں گستاخانہ خاکوں کی اشاعت کیخلاف اسلام آباد میں فیض آباد انٹرچینج پر دھرنا دیا تھا جس کی قیادت علامہ خادم حسین رضوی نے کی تھی۔

علامہ خادم حسین رضوی کے قریبی ساتھی صاحبزادہ بشیر احمد یوسفی کا کہنا ہے کہ اسلام آباد سے واپسی پر ان کی طبعیت خرابی ہوئی تھی، سان سلینے میں دشواری اور بخار بھی تھا، شیخ زید اسپتال میں چیک اپ کروایا گیا مگر طبعیت نہ سنبھل سکی۔

علامہ خادم حسین رضوی 22 جون 1966ء کو ضلع اٹک کے علاقے نکہ توت میں پیدا ہوئے، وہ 1993ء میں محکمہ اوقاف کے خطیب بھی رہے، انہوں نے سوگواران میں 2 بیٹے اور چار بیٹیاں چھوڑے ہیں۔

ٹی ایل پی کے سربراہ ایک ٹریفک حادثے میں معذور ہوگئے تھے، جس کے بعد سے وہ وہیل چیئر استعمال کرتے تھے۔

وزیراعظم عمران خان نے علامہ خادم حسین رضوی کے انتقال پر دکھ کا اظہار کرتے ہوئے اہل خانہ سے تعزیت کی ہے۔

وفاقی وزیر مذہبی امور نور الحق قادری، فیصل جاوید سمیت دیگر سیاسی شخصیات نے بھی علامہ خادم حسین رضوی کے انتقال پر دکھ کا اظہار کیا ہے۔

علامہ خادم حسین رضوی کی جماعت نے 2018ء انتخابات سے چند ماہ قبل اراکین پارلیمنٹ کے حلف نامے میں تبدیلی پر 21 روز طویل دھرنا دیا تھا۔ پاک فوج نے حکومت کو مذاکرات دھرنا دینے والوں سے مذاکرات کی تجویز دی تھی، بعد ازاں دھرنے کے اختتام کیلئے بھی ثالث کا کردار پاک فوج نے ادا کیا تھا، مسلم لیگ ن نے اپنے وزیر قانون زاہد حامد کو عہدے سے ہٹادیا تھا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube