Wednesday, January 20, 2021  | 5 Jamadilakhir, 1442
ہوم   > پاکستان

کروناکیسز میں اضافہ: سندھ میں گھروں سےکام کرنے کی ہدایت

SAMAA | - Posted: Nov 24, 2020 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Nov 24, 2020 | Last Updated: 2 months ago

فائل فوٹو

سندھ حکومت نے صوبے میں کرونا وائرس کے کیسز بڑھنے پر نجی اور سرکاری دفاتر میں 50 فیصد سے کم اسٹاف رکھنے کا حکم دیتے ہوئے آدھے ملازمین کو گھروں سے کام کرنے کی ہدایت جاری کردی۔

محکمہ داخلہ سندھ کی جانب سے جاری نوٹی فیکیشن کے مطابق کرونا وائرس سے بچاؤ کيلئے نئی احتیاطی تدابیر کے تحت صوبائی حکومت نے فوری طور پر مندرجہ ذیل احکامات جاری کیے ہیں، جس پر عمل  31جنوری تک ہوگا۔

نوٹی فیکیشن کے مطابق کاروباری مراکز صبح 6 سے شام 6 بجے تک کھولے رکھنے کی اجازت ہوگی۔ انڈور شادیوں پر پابندی جب کہ کھلے ہالز ميں بھی حکام کی جانب سے 200 مہمانوں تک کی اجازت ہوگی۔ شادی تقریب کی اجازت رات 9 بجے تک ہوگی۔ بوفے سروس اور پیکڈ کھانے پر پابندی ہوگی۔

یہ یہ چیزیں بند ہونگی

سندھ میں سنیما، ،انڈور جمز، انڈور کھیلوں کے مراکز، مزارات اور جمز بھی بند کرنے کا فیصلہ کرلیا گیا ہے، جب کہ ٹیک آوے اور ہوم ڈیلیوری بھی رات 10 بجے تک ہوگی۔ سرکاری اور نجی دفاتر میں 50 فیصد سے کم اسٹاف رکھنے کا حکم دیا گیا ہے۔ آدھے ملازمین گھر سے کام کرینگے۔

فیس ماسک

تمام سرکاری اور نجی دفاتر اور پبلک مقامات پر فیس ماسک پہننا لازمی قرار دیا گیا ہے۔ فیس ماسک نہ پہننے پر جرمانہ عائد کیا جائے گا۔

اسمارٹ لاک ڈاؤن

شہروں میں کرونا وائرس کے کیسز سے متاثر ہونے والے علاقوں میں اسمارٹ لاک ڈاؤن نافذ کیا جائے گا۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube