Tuesday, October 20, 2020  | 2 Rabiulawal, 1442
ہوم   > پاکستان

نوازشریف کا “ٹاما ہاک میزائل”پربیان وائرل

SAMAA | - Posted: Oct 1, 2020 | Last Updated: 3 weeks ago
SAMAA |
Posted: Oct 1, 2020 | Last Updated: 3 weeks ago

نوازشریف کےبیان نے کئی سوالات کھڑے کردیئے

سابق وزیراعظم میاں محمد نواز شریف نے لندن میں رہائش گاہ کے باہر میڈیا سے گفتگو میں اپنے دور حکومت کے اقدامات کا ذکر کرتے ہوئے یہ کہہ گئے کہ "ٹاما ہاک میزائل" ان کی حکومت میں بنائے گئے تھے۔

سوشل میڈیا پر ان دنوں جہاں میاں محمد نواز شریف کے 30 ستمبر کے بیانات کی ویڈیو زیر گردش ہے، وہیں ان کی ایک ویڈیو پر خوب تنقید بھی جاری ہے۔ سابق وزیراعظم نے میڈیا کے سوالوں کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ میں نے ہمیشہ آئین، قانون اور اداروں کی بالا دستی کی بات کی ہے۔

انہوں نے کہا کہ فوجی افسر اور جوان جو سرحدوں پر جا کر لڑتے ہیں اور غازی اور شہید بنتے ہیں میرے لیے ان کی عزت کسی لحاظ سے کم نہیں، مجھے ان سے اتنی ہی محبت ہے، جتنی کسی کو بھی اپنے افواج سے ہوتی ہے۔ تاہم کچھ افراد کی وجہ سے اداروں پر سوالیہ نشان لگ جاتے ہیں۔ چند لوگ اصل فوج کیلئے اور اپنے لیئے بھی بدنامی کا باعث بنتے ہیں۔ ہماری اصل فوج وہ ہے، جسے میرا من تسلیم کرتا ہے، میرا دل تسلیم کرتا ہے۔ میں ان کو سلوٹ کرتا ہوں۔ اور اس فوج کیلئے مجھے الحمد اللہ بڑا فخر ہے کہ میں نے اس فوج کیلئے بہت کچھ کیا ہے۔ اس فوج کیلئے ہم نے اربوں کھربوں خرچ کیے ہیں۔ ہم نے ایٹمی قوت بنایا۔ اس موقع پر نواز شریف بھول میں جے ایف 17 کو جے ایس 17 بول گئے۔ اور کہا کہ یہ ہم نے چین کی مدد سے بنایا۔ یہ جو جتنے بھی آپ کے میزائلز ہیں، اس میں سے آدھے میزائل اللہ کے فضل و کرم سے ہم نے تیار کروائے۔

کیا پاکستان نے ٹاما ہاک سے میزائل ٹیکنالوجی چرائی؟

نواز شریف کی گفتگو کے دوران سب اچانک اس وقت حیران رہ گئے جب انہوں نے ہاتھ کے اشارے سے اوپر نیچے کرتے ہوئے کہا کہ "ٹاما ہاک" میزائل بھی الحمد اللہ نواز شریف نے بنوایا اور یہ میزائل ہم بلوچستان سے لے کر آئے تھے جب کلنٹن نے افغانستان پر راکٹ چلائے تھے اور میزائل گرائے تھے۔ ایک ثابت مل گیا، اس کو اٹھا کر ہم لے کر آئے اور ان کی بیک انجینیرنگ سے ہم نے اسے کروز میزائل بنا دیا۔

انہوں نے میڈیا کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ یہ کوئی چھوٹی موٹی خدمات نہیں ہیں ہماری اور ہمیں فخر ہے کہ ہم نے یہ خدمت کی ہے۔ اور آئندہ بھی کرتے رہیں گے۔ اس موقع پر سابق وزیر خزانہ نے مداخلت کرتے ہوئے ہلکے سے نواز شریف کی تصحیح کرتے ہوئے کہا کہ وہ ٹاما ہاک میزائل نہیں کروز میزائل تھے۔

گفتگو کے دوران نواز شریف نے یہ بھی کہا کہ میزائل مارا افغانستان میں تھا مگر وہ گرا بلوچستان میں اور ہنستے ہوئے کہا کہ وہاں جا کر ہم نے پکڑ لیا اس کو۔

سابق وزیراعظم کے اس بیان پر جہاں پاکستانی صف ماتم تھے، وہیں ٹوئٹر پر بیٹھے بھارتیوں کو پاک فوج اور پاکستان کے خلاف محاذ آرائی کا نیا موقع مل گیا۔ کچھ بھارتیوں کی جانب سے یہ بھی ٹوئٹ کیا گیا کہ پاکستان کے پاس اصل میزائل ٹیکنالوجی ڈاکٹر قدیر کی دی ہوئی نہیں بلکہ امریکی میزائل سے حاصل شدہ ٹیکنالوجی کے مرہون منت ہے۔

سابق وزیراعظم کے بڑے بیان پر فی الحال ن لیگ یا پاک فوج کی جانب سے کوئی ردعمل سامنے نہیں آسکا ہے۔

ٹاما ہاک میزائل ہے کیا؟

ٹاما ہاک میزائل ابتدائی طور پر امریکی ٹیکنالوجی ساز کمپنی جنرل ڈائنیمک اور بعد ازاں ایریزونا میں قائم ریتھن میزائل سسٹم کی جانب سے بنائے گئے ہیں۔

تمام تر موسمی حالات کا مقابلہ کرنے والا یہ میزائل دور تک اپنے ہدف کو کامیابی سے نشانہ بنانے کی صلاحیت رکھتا ہے، یہ میزایل 1 ہزار 500 میل کی رفتار سے اپنے ہدف پر قیامت بن کر ٹوٹتا ہے۔

یہ میزائل زمین پر ہدف کو نشانہ بناتا ہے۔ ٹاما ہاک میزائل امریکی بحریہ، رائل نیوی کے جہازوں اور آبدوزوں میں نصب ہوتا ہے۔ جو زمین پر حملے کیلئے استعمال کیے جاتے ہیں۔

ایک اندازے کے مطابق اس ایک میزائل کی قیمت 1.4 ملین امریکی ڈالر ہیں۔ یہ میزائل ایک چھوٹے جنگی طیارے کی مانند ہوتا ہے، جس میں جیٹ انجن، لیزر رنگ گائرواسکوپس اور ریڈار سمیت کئی سسٹم موجود ہوتے ہیں۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube