Wednesday, September 30, 2020  | 11 Safar, 1442
ہوم   > پاکستان

پنجاب: پولیس افسروں کو روز رات گشت کرنے کا حکم

SAMAA | - Posted: Sep 16, 2020 | Last Updated: 2 weeks ago
SAMAA |
Posted: Sep 16, 2020 | Last Updated: 2 weeks ago
Lahore police

فوٹو: آن لائن

لاہور ہائی کورٹ نے پولیس افسروں کو پنجاب کے ہر ضلع میں روز رات کو گشت کرنے کا حکم دے دیا۔

بدھ 16 ستمبر کو موٹروے خاتون زیادتی کيس کی تحقیقات کے لیے جوڈیشل کمیشن تشکیل کے لیے درخواست پر سماعت ہوئی۔ چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ جسٹس محمد قاسم خان، میاں آصف محمود اور ندیم سرور ایڈووکیٹ نے درخواستوں پر سماعت کی۔ ڈی آئی جی لیگل جواد ڈوگر رپورٹ سمیت عدالت میں پیش ہوئے۔

عدالت نے حکم دیا کہ رات 11 بجے سے 1 بجے ہر ضلع میں ایک سینئر افسر روڈ پر ہونا چاہیئے۔

چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ پوليس کا پرانا پیٹرولنگ سسٹم ناکام ہوگیا ہے، مجھے بتائیں آئی جی پنجاب روزانہ کتنے گھنٹے بدل بدل کر کہاں گشت کرے گا؟ رپورٹ میں کیا کہا ہے، کیا پلان دیا ہے۔

ڈی آئی جی لیگل جواد ڈوگر نے جواب میں کہا کہ ہمارا نظام پہلے ہی موجود ہے اور ہمارا سینئر افسر روز رات کو گشت کرتا ہے۔ ہم نے پہلے سے موجود سسٹم کی تفصیل دی ہے۔

چیف جسٹس نے ریمارکس میں کہا کہ آپ کا پرانا پیٹرولنگ سسٹم ناکام ہوگیا ہے، آپ کا جو سسٹم ہے اس میں راجر جواب آتا ہے میں فلاں چوک میں اور بعد میں پتہ چلتا ہے وہ افسر گھر بیٹھا کھانا کھا رہا ہوتا ہے۔

چیف جسٹس نے کہا کہ مجھے لوگوں کی سکیورٹی چاہئے کیونکہ حکومت آئین کے تحت شہریوں کے تحفظ کی پابند ہے۔

چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ جو بندہ گورنمنٹ کی پراپرٹی پر قتل ہو جائے، آیا گورنمنٹ کو دیت کی رقم کے برابر مرنے والے کے خاندان کو دینی چاہیے؟

عدالت نے فریقین کے وکلاء کو آئندہ سماعت پر بحث کے لیے طلب کر لیا۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube