Wednesday, July 28, 2021  | 17 Zilhaj, 1442

پنجاب:عدالتی حکم کے باوجودپولی تھین بیگزکےخاتمےکےآثارکم

SAMAA | - Posted: Sep 8, 2020 | Last Updated: 11 months ago
SAMAA |
Posted: Sep 8, 2020 | Last Updated: 11 months ago

چھوٹے دکاندار غیر آمادہ دکھائی دیتے ہیں

پنجاب میں پولی تھین بیگزمرحلہ وارختم کیے جانے کے عدالتی حکم پرعملدرآمد جاری ہے۔لاہور میں ریسٹورنٹس اور بڑے اسٹورز پرکپڑے یا کاغذ کے بیگ استعمال کیے جارہے ہیں مگرچھوٹے دکاندار اور عام شہری ابھی اس کےلیے تیار نہیں ہیں۔

لاہورہائی کورٹ نے مارچ میں لاہور میں پائلٹ پراجیکٹ کے طور پر بڑے اسٹورز اور بیکریوں پر پلاسٹک بیگ کی پابندی عائد کی تھی جومرحلہ وار دوسری دکانوں اور دیگر شہروں میں بھی لاگو ہونا تھی۔اگست میں دوبارہ سماعت پرعدالت نے 31 اگست تک کی مہلت دی جس کے باوجود ابھی بھی ان کا استعمال جاری ہے۔

 ترجمان تحفظ ماحولیات ساجد احمد نے بتایا کہ ان کے محکمےنےعدالتی حکم کے بعد پلاسٹک بیگز کے خلاف کاروائیوں کا آغاز بھی کردیا ہے۔عوام کواس کے نقصانات کے بارے میں بتانا بھی ان کی حکمت عملی میں شامل ہے۔

دوسری جانب صرف لاہورمیں پلاسٹک بیگز تیار کرنے والی 400 سےزائد فیکٹریاں موجود ہیں جہاں کام کرنے والےہزاروں ملازمین کےبےروزگار ہونےکاخطرہ لاحق ہوگیا ہے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ قانون سازی کرنے کے ساتھ ساتھ لوگوں کوپلاسٹک بیگز کے حوالے سے شعور دینا بھی ضروری ہے تاکہ مستقبل میں سب کو صاف ستھرا ماحول مل سکے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube