Saturday, October 31, 2020  | 13 Rabiulawal, 1442
ہوم   > پاکستان

خودکش بمبار پولیس لائنز کو نشانہ بنانا چاہتا تھا،سی ٹی ڈی

SAMAA | - Posted: Aug 20, 2020 | Last Updated: 2 months ago
Posted: Aug 20, 2020 | Last Updated: 2 months ago

لاہور سے گرفتار خود کش بمبار کے سہولت کار نے دوران تفتیش انکشاف کرتے ہوئے بتایا کہ ان کا ہدف لاہور میں پولیس لائنز کی عمارت تھا، جب کہ مکرم خراسانی نے انہیں حملے کا حکم دیا تھا۔

لاہور میں ریلوے اسٹیشن کے قریب سے گرفتار کالعدم تنظیم کے دہشت گرد کیلئے سہولت کاری کرنے والے ملزم نے دوران تفتیش سنسنی خیز انکشافات کرتے ہوئے بتایا کہ وہ خود کش بمبار کیلئے سہولت کاری کر رہا تھا۔

گرفتار سہولت کار لیاقت کا مزید کہنا تھا کہ حملے کیلئے 17 سالہ خود کش بمبار کو پڑوسی ملک سے لايا گيا تھا۔ بمبار کے پہنچتے ہی علی الصبح دھماکا کرنا تھا۔ ريلوے اسٹيشن پر بمبار کا انتظار تھا کہ گرفتار ہوگيا۔

دہشت گرد لياقت خان کے خلاف محکمہ انسداد دہشت گردی ( سی ٹی ڈی ) کی مدعيت ميں مقدمہ درج کر کیا گیا ہے۔ جب کہ دوسری جانب پڑوسی ملک سے آنے والے خود کش بمبار کی تلاش ابھی جاری ہے۔

واضح رہے کہ قانون نافذ کرنے والے اداروں کی جانب سے خود کش بمبار کے سہولت کار کو منگل 18 اگست کی صبح لاہور ریلوے اسٹیشن کے قریب سے گرفتار کیا گیا تھا۔

سی ٹی ڈی کے مطابق دہشت گرد سہولت کار کے قبضے سے خود کش جیکٹ، دھماکا خیز مواد، بم، پستول ، گولیاں اور حساس مقامات سے متعلق دستاویزات برآمد کی گئی تھیں۔

سہولت کار کے خلاف خفیہ اطلاعات پر ملنے والی رپورٹس پر کامیاب آپریشن کیا گیا تھا۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube