Saturday, August 15, 2020  | 24 Zilhaj, 1441
ہوم   > پاکستان

پشاور:جج کےسامنےتوہین رسالت کے ملزم کو گولی ماردی گئی

SAMAA | - Posted: Jul 29, 2020 | Last Updated: 2 weeks ago
SAMAA |
Posted: Jul 29, 2020 | Last Updated: 2 weeks ago

فائل فوٹو: پشاور کی مقامی عدالت کا اندرونی منظر

پشاور کی مقامی عدالت میں توہین رسالت کے ملزم کو سماعت کے آغاز پر گولی مار کر قتل کردیا گیا۔ فائرنگ کرنے والے شخص کو گرفتار کرلیا گیا۔

پولیس کے مطابق پشاور کی مقامی عدالت میں 29 جولائی کو توہین رسالت سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی۔ اس موقع پر توہین رسالت کے ملزم طاہر احمد نسیم کو عدالت کے روبرو پیش کیا گیا۔ عدالت میں سماعت شروع ہی ہوئی تھی کہ ایک شخص نے کمرہ عدالت کے باہر سے اندر آکر ملزم کو گولی مار کر قتل کردیا۔

حملہ آور نے مقتول کو جج کے سامنے گولی ماری، جس سے وہ موقع پر ہی جاں بحق ہوگیا۔ واقعہ کے پولیس نے فائرنگ کرنے والے ملزم کو کمرہ عدالت سے گرفتار کرلیا۔ فائرنگ کا واقعہ ایڈیشنل سیشن جج شوکت اللہ کی عدالت میں پیش آیا۔

توہین رسالت کا مقدمہ جج شوکت اللہ کی عدالت میں زیر سماعت تھا۔ مقتول طاہر احمد نسیم کا تعلق پشتخرہ سے ہے۔ فائرنگ کرنے والا ملزم کی شناخت خالد کے نام سے کی گئی ہے، جو بورڈ بازار کا رہائشی ہے۔

پولیس کے مطابق مقتول کے خلاف تعزیرات پاکستان کے سیکشن 295 کے تحت توہین رسالت کا مقدمہ درج تھا۔ سماعت کے موقع پر مقتول طاہر نسیم کو عدالت میں پیش کیا گیا۔

واقعہ پر امریکا کی جانب سے بھی ردعمل سامنے آیا۔ امریکی حکام کے مطابق مرنے والا شخص امریکی شہری تھا۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube