Wednesday, September 30, 2020  | 11 Safar, 1442
ہوم   > پاکستان

سندھ ہائیکورٹ: کے الیکٹرک کی سرزنش، لوڈشیڈنگ کے خاتمے کاحکم

SAMAA | - Posted: Jul 24, 2020 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Jul 24, 2020 | Last Updated: 2 months ago

شہر میں 12 گھنٹے تک لوڈ شیڈنگ جاری ہے، عدالت

کے اليکٹرک کی نااہلی کی گونج عدالت بھی پہنچ گئی۔ سندھ ہائيکورٹ نے بجلی فراہم کرنیوالی کمپنی پر سخت برہمی کا اظہار کرتے ہوئے غيراعلانيہ لوڈشيڈنگ ختم کرنے کا حکم دے ديا۔ عدالت نے ريمارکس دیئے کہ کے اليکٹرک کی وجہ سے کراچی والے بڑی تکليف ميں ہيں، شہر ميں لوڈشيڈنگ کا دورانيہ 12 گھنٹے تک ہوگيا ہے۔

کراچی میں لوڈ شیڈنگ ختم ہونے کا نام نہیں لے رہی، کے الیکٹرک کی جانب سے شہر میں گرمیوں کے آغاز کے ساتھ ہی لوڈشیڈنگ کا دورہ 4 سے 12 گھنٹے تک بڑھادیا گیا۔

یہ بھی پڑھیں : صرف ہم قصوروار نہیں پورا سسٹم ہے، کے الیکٹرک

مئی سے جاری اعلانیہ اور غیراعلانیہ لوڈشیڈنگ کا معاملہ سندھ ہائیکورٹ پہنچ گیا، کراچی میں کنڈے اور لوڈشیڈنگ سے مستثیٰ علاقوں میں بجلی کی بندش کیخلاف درخواست کی سماعت کے دوران سندھ ہائيکورٹ نے کے الیکڑ پر سخت برہم کا اظہار کیا۔  کے اليکٹرک کے وکيل نے بتايا کہ کئی علاقوں ميں کنڈے ہٹانے کے باوجود دوبارہ لگاديے گئے۔

مزید جانیے : نیپرا نے ’کے الیکٹرک‘ کا لائسنس معطل ہونے کاعندیہ دیدیا

جسٹس خادم حسین شیخ نے ريمارکس دیئے کہ ہمارے سامنے باتيں مت بنائيں، بڑی بڑی تاروں پر عام آدمی کنڈا کیسے لگا سکتا ہے، اِس کا مطلب ناکارہ لوگ بھرتی کئے ہوئے ہیں، کے اليکٹرک صرف پيسے بنارہا ہے، ہر کوئی اُس پر انگلی اُٹھا رہا ہے، ايسی صورتحال ميں تو کے اليکٹرک کا لائسنس معطل کردينا چاہئے۔ عدالت نے کے الیکٹرک انتظاميہ سے 25 اگست تک رپورٹ طلب کرلی۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube