Friday, August 7, 2020  | 16 Zilhaj, 1441
ہوم   > پاکستان

پاکستان میں کرونا سے ہلاکتیں 5 ہزار سے تجاوز کرگئیں

SAMAA | and - Posted: Jul 10, 2020 | Last Updated: 4 weeks ago
Posted: Jul 10, 2020 | Last Updated: 4 weeks ago

پاکستان میں اسمارٹ لاک ڈاؤن اور ایس او پیز پر عمل نے کام دکھا دیا، کرونا وائرس کے کیسز کی تعداد میں مسلسل کمی آرہی ہے۔ نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشنز سینٹر کے مطابق تقریباً ڈیڑھ لاکھ افراد وائرس کو شکست دے چکے، ایکٹو کیسز کی تعداد 90 ہزار سے کم ہوگئی۔ 24 گھنٹوں کے دوران 23 ہزار ٹیسٹ میں سے 2751 مثبت آئے، 75 نئی ہلاکتوں کے ساتھ تعداد 5 ہزار ہوگئی۔

پاکستان حکومت کے کرونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کیلئے اقدامات کارگر ثابت ہورہے ہیں، اسمارٹ لاک ڈاؤن کی حکمت عملی اور ایس او پیز پر عملدرآمد سے نئے کیسز میں مسلسل کمی واقع ہورہی ہے، پرانے مریضوں کی صحتیابی کے رجحان میں بھی اضافہ ہوگیا۔

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشنز سینٹر کے جاری تازہ اعداد و شمار جاری کے مطاق ملک بھر میں وباء کو شکست دینے والوں کی تعداد ایک لاکھ 49 ہزار 92 ہوچکی، ایکٹو کیسز 90 ہزار سے بھی کم ہوکر 89 ہزار 500 کے قریب رہ گئے۔

این سی او سی کے مطابق ملک میں کرونا کیسز کی مجموعی تعداد 2 لاکھ 43 ہزار سے زائد ہے، جن میں 1 لاکھ 900 سندھ، 85 ہزار سے زائد پنجاب، 30 ہزار کے قریب خیبر پختونخوا، اسلام آباد میں لگ بھگ 14 ہزار، بلوچستان میں 11 ہزار سے زائد، گلگت بلتستان میں 1619 جبکہ آزاد کشمیر میں کرونا کیسز ڈیڑھ ہزار کے قریب پہنچ چکے ہیں۔

این سی او سی کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران 23 ہزار سے زائد ٹیسٹ کئے گئے، جن میں 2751 مثبت نکلے، اس دوران مزید 75 افراد جاں بحق ہوئے، جن میں سے 68 افراد اسپتالوں اور 7 گھروں میں چل بسے، کرونا وائرس سے مجموعی ہلاکتیں 5 ہزار 58 تک پہنچ گئیں۔

اسلام آباد سے نمائندہ فرح ربانی کے مطابق وفاقی دارالحکومت میں ایک ہفتے کے دوران کرونا کیسز میں نمایاں کمی دیکھنے میں آئی ہے، ضلعی انتظامیہ کی جانب سے جاری اعدادو شمار میں بتایا گیا ہے کہ 4 جولائی سے 9 جولائی تک صرف 537 کیسز رپورٹ ہوئے، اس سے قبل 27 جون سے 3  جولائی تک 1311 نئے کیسز رپورٹ ہوئے تھے۔

انتظامیہ کا کہنا ہے کہ وفاقی دارالحکومت میں سیل کئے گئے علاقے بھی ڈی سیل کردیئے گئے ہیں، شہریوں کی احتیاط اور ایس او پیز پر عمل سے کيسز کم ہوئے۔

لاہور سے رپورٹر دانيال عمر نے بتایا کہ اسمارٹ لاک ڈاون کے لاہور سميت پنجاب بھر ميں مثبت نتائج سامنے آنے لگے ہيں، وہاں بھی کرونا مريضوں کی تعداد میں کمی کا رحجان دیکھنے میں آرہا ہے، شدید علیل مریضوں کی تعداد میں کمی اور اسپتالوں پر دباؤ بھی گھٹ رہا ہے۔

رپورٹ کے مطابق  یکم جولائی کو آئی سی یو میں 93 مریض وینٹی لیٹرز پر تھے، جو 8 جولائی کو 76 ہوگئے جبکہ یکم جولائی کو ہائی ڈیپنڈینسی یونٹ میں 164 مریض آکسیجن پر جن کی تعداد بھی کم ہوکر 121 رہ گئی ہے۔

پنجاب میں یکم جولائی کو آئسولیشن وارڈز میں 197 مریض زیرعلاج تھے، اب ان کی تعداد صرف 51 ہے، 61 فيصد مريض کرونا وائرس سے صحتیاب ہوچکے ہیں۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube