Sunday, September 20, 2020  | 1 Safar, 1442
ہوم   > پاکستان

حکومت کا15ستمبرسےتعلیمی ادارےکھولنےکااعلان

SAMAA | - Posted: Jul 9, 2020 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Jul 9, 2020 | Last Updated: 2 months ago

لیبارٹریزمیں کام کرناچاہتےہیں انہیں یونیورسٹی پہلےبھی بلاسکتی ہیں

وفاقی وزیرتعلیم شفقت محمود نے اعلان کیا ہے کہ ملک بھر کے تعلیمی ادارے 15 ستمبر سے کھولنے کا فیصلہ کیا ہے، اگست کے پہلے يا تيسرے ہفتے میں اس معاملے پر نظر ثانی کريں گے،اپنی سفارشات اين سی اوسی ميں لے کرگئے تھے جس کے بعد یہ فیصلہ کیا گیا۔ تاہم اگر صحت کی صورتحال بہتر نہ ہوئی تو تعلیمی ادارے نہیں کھولےجائیں گے۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئےشفقت محمود نے بتایا کہ بین الصوبائی وزراء تعلیم کانفرنس میں تعلیمی ادارے کھولنے اور امتحانات کیسے لینے ہیں کے حوالے سے بات کی گئی، سیکرٹری تعلیم بھی اجلاس میں موجود تھے۔

انھوں نے واضح کردیا کہ تعلیمی ادارے 15 جولائی کو نہیں کھولیں گے بلکہ15 ستمبر سے تعلیمی ادارے کھل جائیں گے جن میں یونیورسٹی اور دیگر نوعیت کے تمام ادارے شامل ہیں۔

وفاقی وزیرتعلیم نے بتایا کہ ستمبر کے پہلے ہفتے میں اس حوالے سے دوبارہ جائزہ بھی لیا جائے گا تاہم اگر صحت کےمعاملات ٹھیک نہ ہوئے توادارے نہیں کھلیں گے۔انھوں نےمزید کہا کہ ادارےکھولنےکےلیےجامع ایس اوپیز بنائی جائیں گی اوراس حوالےسے تجاویزآرہی ہیں کہ تعلیمی اداروں کے اوقات کار کم کردیئےجائیں۔ اس کےعلاوہ پہلے بڑی کلاسز کوبلایا جائےاور پھرچھوٹی کلاسز کو بلانے کی تجویز بھی پیش کی گئی ہے۔شفقت محمود نے یہ بھی بتایا کہ صوبوں کو بھی کہا ہے کہ ایس او پیز کے حوالےسے اپنی اپنی تجاویزتحریر کرکےارسال کریں۔

یکم ستمبرسےایس اوپیزکےساتھ اسکول کھولےجائیںگے،شفقت محمود

انھوں نے ایک نکتےکی نشان دہی کی کہ کافی ماہ سےتعلیمی ادارے بند ہیں جس کی وجہ سے صفائی کے معاملات بھی دیکھنا ہونگے،ایس او پیز پرعمل کروانے کیلئے بھی ٹریننگ دینا ہوگی۔

انھوں نے یہ بھی بتایا کہ وفاقی وزارت تعلیم کی جانب سے اداروں کو اجازت ہے کہ انتظامی دفاتر کھول سکتےہیں،پی ایچ ڈیز کے طلباء جو لیبارٹریز میں کام کرنا چاہتے ہیں انہیں یونیورسٹی پہلے بھی بلاسکتی ہیں۔

ہاسٹل اور آن لائن تعلیم پر انھوں نے کہا کہ آن لائن تعلیم میں دوردرازعلاقوں میں رہنے والے طلباء کو بہت دشواری پیش آئی ہے،یونیورسٹیز کو اجازت دی ہے کہ دور دراز علاقوں کے طلباء کو ہاسٹل میں بلاسکتے ہیں تاہم 100 طلبہ کی گنجائش والے ہاسٹل میں صرف 30 طلباء کو بلایا جا سکتا ہے۔

امتحانات سےمتعلق شفقت محمود نےیہ بتایا کہ میڈیکل کالجز کے اندر بغیر امتحان کے ڈاکٹر تو نہیں بن سکتے،یونیورسٹی کیلئے داخلہ ٹیسٹ بھی لازمی ہوتے ہیں، اس لئے جولائی کے دوسرے ہفتے سےکچھ ادارے امتحانات لے سکتے ہیں تاہم امتحانات میں 6 فٹ کا فاصلہ اورماسک پہننا لازمی ہوگا،امتحانات کوشش کریں کہ کھلی جگہ میں لیے جائیں۔ انھوں نے زور دے کر کہا کہ اگرامتحانات کے دوران ایس او پیز پر عمل نہیں کیا گیا تو اداروں کو بند کردیا جائے گا۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube