Thursday, August 13, 2020  | 22 Zilhaj, 1441
ہوم   > پاکستان

میرج ہال ایسوسی ایشن کاملک گیراحتجاج کااعلان

SAMAA | - Posted: Jul 6, 2020 | Last Updated: 1 month ago
SAMAA |
Posted: Jul 6, 2020 | Last Updated: 1 month ago

آل پاکستان میرج ہال انڈسٹری ایکشن کمیٹی کے صدر خالد ایوب نے حکومت کو دھمکی دیتے ہوئے کہا ہے کہ ہمارے مطالبات نہ مانے اور ہالز کھولنے کی اجازت نہ دی تو 13 جولائی کو ملک گیر احتجاج کیا جائے گا، تمام ورکرز 20 جولائی کو ڈی چوک پر احتجاج کریں گے۔

اسلام آباد میں ممبران کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے آل پاکستان میرج ہال انڈسٹری ایکشن کمیٹی کے صدر خالد ایوب کا کہنا تھا کہ حکومت نے شادی ہالز ریسٹو رینٹس کو اتنی مشکل میں کیوں ڈالا؟، شادی ہالز اور ریسٹو رینٹس میں تمام ایس او پیز موجود ہیں، شادی ہالز میں ہر کوئی صاف ستھرا ہو کر جاتا ہے، ہمارے برتن فرنیچر سب کچھ صاف ہوتا ہے، اگر حکومت نے ہمیں کام کی اجازت نہ دی اور ایسے کیا تو 3 سال تک کوئی ٹیکس نہیں دیں گے۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ حالات میں شادی ہالز اور ریسٹو رینٹس آدھی قیمت پر بک رہے ہیں، 13 تاریخ کو پورے ملک میں احتجاج، جب کہ 20 جولائی کو ڈی چوک پر احتجاج کیا جائے گا۔ حکومت اس انڈسٹری پر سب سے پہلے شب خون مارا گیا ہے، رات 12 بجے ڈی سیز نے اگلے دن کے پروگرام کیسنل کروائے ہیں۔ انہوں نے وزیراعظم سے سوال کرتے ہوئے کہا کہ آپ کیسے وزیر اعظم ہیں اقتصادی پہیہ کو جام کرنا چاہتے ہیں؟، جن بیماریوں سے لوگ مرتے ہیں اس پر آپ نے ایک محلہ بھی بند نہیں کیا؟، ترکی سمیت کئی ممالک میں شادی ہالز کھل گئے ہیں۔ انہوں نے وزرا کے ہاؤسز میں ہونے والی پارٹیز کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ، وزیر ہاؤس میں خود پارٹیاں کر رہے ہیں چیف جسٹس نوٹس لیں، کیا آپ کاروباری بند کر کے اس ملک کے اثاثوں کو فروخت کریں گے ؟۔

خالد ایوب کا مزید کہنا تھا کہ حکومت کاربار پر اثر ڈال کر غریبوں کا قتل کر رہی ہے، آج شادی ہالز کے ورکرز سڑکوں پر آ گئے ہیں، 10 اور 17 ہزار تنخواہ کے لوگوں کا جینا مشکل ہو گیا ہے
،حکومت ہمارے ٹیکس میں نرمی اور بلا سود قرضے دے۔ انہوں نے الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ ڈی سیز اس وقت بھتہ خوری کیلئے کام کر رہے ہیں۔

پریس کانفرنس کے اختتام صدر ٓل پاکستان میرج ہال انڈسٹری ایکشن کمیٹی نے کہا کہ پیسہ بٹور کر 90فیصد حکومت کو دیا جا رہا ہے، شادی ہالز کے ساتھ بہت سی آشیا کی انڈسٹری کا تعلق ہے، وزیر اعظم صاحب غریب مزدور چار مہینے سے بھوکے ہیں آپ انکو کیا دینا چاہتے ہیں، کھانے کیلئے جو آتے ہیں وہ ہاتھ ضرور دھوتے ہیں، حکومت شادی ہالز کھولے اور نقصان کا ازالہ کریں۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube