Monday, August 3, 2020  | 12 Zilhaj, 1441
ہوم   > پاکستان

شیخ رشید کی وزارت میں 100 سے زائد خونی حادثات

SAMAA | - Posted: Jul 3, 2020 | Last Updated: 1 month ago
SAMAA |
Posted: Jul 3, 2020 | Last Updated: 1 month ago

شیخ رشید کی وزارت میں اب تک ریلوے کے 100 سے زائد حادثے ہوچکے ہیں۔ خوفناک حادثات اور ریل گاڑیاں پٹڑی سے اترنے کے باعث سیکڑوں افراد جاں بحق اور ٹرینوں کا شیڈول بھی شدید متاثر ہوتا رہا ہے۔

شیخوپورہ میں بغیرپھاٹک والی ریلوے کراسنگ پر ٹرین اور کوسٹر کے تصادم میں بیس افراد جاں بحق جبکہ آٹھ زخمی ہوگئے ہیں۔

اس سے قبل ناقص انتظامات کے باعث سانحہ رحیم یارخان میں ستر سے زائد انسانی جانیں گئیں۔ صادق آباد میں اکبر ایکسپریس اور مال گاڑی کی ٹکر کے نتیجے میں بارہ افراد جاں بحق ہوئے جبکہ حیدر آباد میں جناح ایکسپریس اورمال گاڑی کے تصادم میں تین مسافر جان سے گئے۔ روہڑی ٹرین حادثہ میں مسافر کوچ کے ٹکرانے سے 15 سے زائد افراد جان بحق ہوئے۔

ان کے علاوہ ٹرین کی پاوروین اور بوگیوں میں آگ لگنے کے بھی سات واقعات ہوچکے ہیں۔ 34 مسافر ٹرینیں اور37 مال گاڑیاں ڈی ریل بھی ہوئی ہیں۔

پاکستان میں 3000 سے زائد بغیر پھاٹک ریلوے کراسنگ بھی موجود ہیں۔ ریلوے حکام صوبائی حکومتوں کو کئی بار فینسنگ کے لیے خط لکھ چکی مگر کوئی جواب نہیں ملا۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube