Thursday, July 9, 2020  | 17 ZUL-QAADAH, 1441
ہوم   > پاکستان

ںیب کے وزیراعلیٰ سندھ سے 28 سوالات

SAMAA | - Posted: Jun 6, 2020 | Last Updated: 1 month ago
SAMAA |
Posted: Jun 6, 2020 | Last Updated: 1 month ago

فوٹو: فائل

جعلی اکاؤنٹس کے روشن سندھ پروگرام میں نیب راولپنڈی نے وزیر اعلیٰ سندھ سے 28 سوالات پوچھ لئے۔ مراد علی شاہ کو تحریری سوالنامہ ارسال کرتے ہوئے 14 دن میں جواب طلب کرلیا۔

روشن سندھ پروگرام میں مبینہ کرپشن اور بے ضابطگیوں کے کیس میں قومی احتساب بیورو راولپنڈی نے وزیراعلیٰ مراد علی شاہ کو پیشی کے بعد تحریری سوالنامہ بھی بھیج دیا جس میں پوچھا گیا ہے کہ بطور وزیر خزانہ آپ نے روشن سندھ پروگرام میں سیکرٹری فنانس کی تجاویز کو نظر انداز کیوں کیا۔

یہ سوال بھی کیا گیا ہے کہ جب چیف سیکرٹری نے پی سی ٹُو کے تحت فیزیبلٹی نہ ہونے کی نشاندہی کر دی تھی تو منصوبہ کیوں شروع کیا گیا اور ایڈیشنل چیف سیکرٹری نے سولر لائٹس کو “غیر معیاری ” قرار دیا تھا تو معاملے پر توجہ کیوں نہ دی گئی۔

نیب سوالنامے میں یہ بھی پوچھا گیا ہے کہ کیا یہ درست ہے کہ سندھ ہائیکورٹ کی جانب سے قائم کمیٹی نے بھی منصبوے پر سوالات اٹھائے تھے اور اسکینڈل کے مبینہ ماسٹر مائنڈ شرجیل انعام میمن کی ایما پر سب کچھ نظرانداز کرتے ہوئے فنڈز جاری کیوں کیے گئے۔

مراد علی شاہ کے سامنے یہ سوال بھی رکھا گیا ہے کہ شرجیل میمن نے جن کمپنیوں سے کِک بیکس لیں وہ سب کچا چھٹا کھول چکیں۔ ملزمان پلی بارگین بھی کر چکے۔ اس پر آپ کیا کہیں گے۔

نیب کے مطابق وزیراعلیٰ سندھ کی دوبارہ طلبی کا فیصلہ تحریری جواب موصول ہونے کے بعد کیا جائے گا۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube