Saturday, September 19, 2020  | 30 Muharram, 1442
ہوم   > پاکستان

چینی اسکینڈل کی رپورٹ: کابینہ اجلاس میں وزرا کی تکرار

SAMAA | - Posted: Apr 8, 2020 | Last Updated: 5 months ago
Posted: Apr 8, 2020 | Last Updated: 5 months ago

وفاقی کابینہ کے گزشتہ روز کے اجلاس میں چینی کی برآمد اور سبسڈی پر وفاقی وزرا کے مابین تکرار بڑھنے پر وزیراعظم نے مداخلت کرکے معاملہ ٹھنڈا کروا دیا۔

پاکستان میں چینی بحران اور قیمتوں میں اضافے کی تحقیقات کیلئے وزیراعظم کی جانب سے تشکیل کردہ کمیٹی کی ابتدائی رپورٹ سامنے آگئی ہے۔ اس کے بعد وفاقی کابینہ کے ارکان اور وزیراعظم کے قریبی ساتھی جہانگیر ترین پر انگلیاں اٹھ رہی ہیں۔

سات اپریل کو وفاقی کابینہ کے اجلاس میں چینی کی سبسڈی اور برآمد پر بات شروع ہوئی تو وفاقی وزیر مراد سعید نے وزیر پلاننگ اینڈ ڈیولپمنٹ اسد عمر کو مخاطب کرکے کہا کہ چینی پر سبسڈی کا فیصلہ اقتصادی رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں ہوا جس کی صدارت آپ کررہے تھے۔ آپ اس کی ذمہ داری وزیراعظم پر ڈالنے کی بجائے خود تسلیم کریں۔

مراد سعید کے سوال پر اسد عمر نے کہا کہ یہ فیصلہ سب کا مشترکہ تھا۔ اس میں وزیر فوڈ سکیورٹی سمیت دیگر اعلیٰ حکام بھی موجود تھے۔ وزرا کے مابین نوک جھونک کا سلسلہ طویل ہوگیا۔ اس سے پہلے کہ بات مزید بگڑتی، وزیراعظم نے مداخلت کرکے معاملہ ٹھنڈا کروایا۔

اجلاس میں چینی کی برآمد پر وزیر دفاع پرویز خٹک نے رزاق داؤد کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ ہمیں یہ بتایا گیا کہ چینی برآمد ہورہی ہے لیکن وہ تو افغانستان اسمگل ہوتی رہی۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube