ہوم   > پاکستان

پنجاب میں ڈاکٹرزکااحتجاج،کام بندکرنےکی دھمکی

SAMAA | and - Posted: Mar 17, 2020 | Last Updated: 2 months ago
Posted: Mar 17, 2020 | Last Updated: 2 months ago

حفاظتی کٹس کی شدید قلت

پنجاب میں کرونا وائرس کے پیش نظر حکومتی اقدامات جاری ہیں۔صوبے میں علاج پر مامورعملے کے لیے حفاظتی کٹس کی شدید قلت ہے۔ ڈاکٹرز نے احتجاج کرکے حکومت سے مطالبہ کيا ہے کہ مطلوبہ سامان جلد مہيا کيا جائے۔

پنجاب کے اسپتالوں میں کرونا سے بچاؤکے لیے حفاظتی کٹس ناپید ہیں۔ صوبائی حکومت نے 28 فروری کو وفاقی حکومت سے حفاظتی کٹس مانگیں مگر کچھ نہ ملا۔ صوبے کے ٹیچنگ اسپتالوں کو 26 لاکھ سے زائد حفاظتی کٹس کی ضرورت ہے۔

وفاقي حکومت کو لکھے گئے خط ميں ضروريات سے آگاہ کيا گيا ہے جس کے مطابق ايک لاکھ 7 ہزار سے زائد گاؤن،1 لاکھ 46 ہزار این 95 ماسک اور 1 لاکھ 20 ہزار 700 سرجیکل گلوز شامل ہيں۔

ادھرينگ ڈاکٹرز نے کٹس کی کمی پر اسپتالوں کے انڈوراور آؤٹ ڈور میں کام بند کردیا اور کہا کہ حفاظتی کٹس نہ دی گئی تو ایمرجینسی میں بھی کام بند کردیں گے۔

سیکرٹری صحت نبیل اعوان کےمطابق انٹرنیشنل مارکیٹ میں حفاظتی کٹس کی قلت پائی جاتی ہے،امید ہے کہ جلد مطلوبہ حفاظتی کٹس مل جائیں گی۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube