ہوم   > پاکستان

اسلامی نظریاتی کونسل کا اجلاس،زینب الرٹ بل پر غور

SAMAA | - Posted: Mar 10, 2020 | Last Updated: 3 months ago
Posted: Mar 10, 2020 | Last Updated: 3 months ago

اسلام آباد میں اسلامی نظریاتی کونسل کا اجلاس جاری ہے، جس میں زینب الرٹ بل اور مسلک کے ناموں پر قائم مساجد سے متعلق جائزہ لیا جا رہا ہے۔

اسلامی نظریاتی کونسل کا اجلاس چیئرمین قبلہ ایاز کی صدارت میں جاری ہے۔ دو روزہ اجلاس میں مساجد سے مسلک کا نام ختم کرنے سے متعلق اسلامی نظریاتی کونسل جائزہ لے گی، جب کہ برطانوی ارکان پارلیمنٹ کی پاکستان میں مذہبی طبقات سے متعلق رپورٹ کا بھی کونسل جائزہ لے گی۔

اسلامی نظریاتی کونسل پیغام پاکستان بیانیہ کے تناظر میں وراثتی قوانین کا جائزہ ان دو روز اجلاس کے دوران لے گی۔

زینب الرٹ بل

زینب الرٹ بل کے تحت بچوں کی گمشدگی کی اطلاع دینے کیلئے 109ہیلپ لائن قائم کی جائے گی،بروقت اطلاع اور ایف آئی آر درج نہ کرنے والے پولیس اہلکار کو2 سال قید اور 50 ہزار سے ایک لاکھ جرمانہ عائد کیا جائے گا۔

اس بل کے تحت ملزمان کی سزاؤں کا تعین بھی کیا جائے گا۔ بل کے تحت پولیس اہلکار اطلاع پر فوری ایف آئی آر درج کرنے کا پابند ہوگا۔ متن میں یہ بھی درج ہے کہ بچوں کے خلاف جرائم کی سزائیں، سزائے موت سے لے کر عمر قید اور یا پھر زیادہ سے زیادہ 14 سال اور کم سے کم سات سال قید کی سزا رکھی گئی ہے۔

بل کے مطابق کسی بھی بچے کے اغوا یا اس کے ساتھ جنسی زیادتی کے واقعہ کا مقدمہ درج ہونے کے 3 ماہ کے اندر اندر اس مقدمے کی سماعت مکمل کرنا ہوگی۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube