ہوم   > پاکستان

کروناوائرس:سوشل میڈیاپروائرل آڈیوجعلی ہے،کمشنرکراچی

SAMAA | - Posted: Mar 2, 2020 | Last Updated: 3 months ago
SAMAA |
Posted: Mar 2, 2020 | Last Updated: 3 months ago
یہ تصویر ٹائمز سے لی گئی ہے

ڈپٹی کمشنر کراچی کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ سوشل میڈیا پر وائرل آڈیو جعلی ہے،آڈیو میں میں بتائی گئی باتوں میں صداقت نہیں۔ عوام ایسی ویڈیوز اور آڈیوز سے خوف زدہ نہ ہوں۔

پیر کے روز ڈپٹی کمشنر سینٹرل سے جاری اہم پریس نوٹ میں عوام کو آگاہ کیا گیا ہے کہ سوشل میڈیا پر تیزی سے وائرل ہونے والی آڈیو کلپ میں ایک شخص عوام کو گمراہ کرنے کیلئے غلط اعداد و شمار اور کیسز کا ذکر کر رہا ہے۔

پریس نوٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ ڈسٹرکٹ سینٹرل کراچی کے علاقوں سے متعلق سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی آڈیو کلپ کے بعد مختلف علاقوں میں عوام بے چین اور خوف کا شکار ہے۔ کرونا وائرس یا اس کے کیسز سے متعلق صرف متعلقہ اداروں کے علاوہ کوئی اور اتھارٹی بیان جاری کرنے کی مجاز نہیں۔

انہوں نے کہا کہ ڈسٹرکٹ سینٹرل میں کسی کرونا وائرس کی تصدیق نہیں ہوئی۔ وائرل آڈیو میں بتائی گئی باتوں میں کوئی صداقت نہیں۔ ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر کا مزید کہنا تھا کہ آڈیو کلپ وائرل کرنے والے شخص کو منظر عام پر لانے اور ان کے خلاف تحقیقات کا آغاز کردیا گیا ہے، متعلقہ شخص کے خلاف سخت ایکشن لیا جائے گا۔

یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ سینٹرل کراچی کے علاقوں میں لیاقت آباد، نارتھ کراچی، نارتھ ناظم آباد اور گلبرگ شامل ہیں۔

واضح رہے کہ 2 روز قبل سوشل میڈیا کے مختلف پلیٹ فارمز میں ایک نامعلوم شخص کی جانب سے آڈیو جاری کی گئی تھی جس میں ان کا یہ دعویٰ تھا کہ وہ ایک ضروری بات کرنا چاہتا ہے اور وہ ڈی سی آفس میں موجود ہے اور ای یو سی کی جانب سے ایک خط جاری کیا گیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ سینٹرل کے علاقوں سے 144 مشتبہ کرونا وائرس سے متعلق افراد آئے ہیں۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube