ہوم   > پاکستان

مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جبر و ستم 200 روزسےجاری

SAMAA | - Posted: Feb 20, 2020 | Last Updated: 1 month ago
SAMAA |
Posted: Feb 20, 2020 | Last Updated: 1 month ago

مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی جانب سےمسلسل جبر و ستم اور لاک ڈاوَن کو 200 روز گزر گئے جبکہ اس دوران بھارتی فوجیوں نے وادی میں 2 خواتین اور 4 نوجوانوں سمیت 70 کشمیریوں کو شہید کر دیا۔

کشمیر میڈیا سروس کے ریسرچ سیکشن کے مطابق 11 کشمیری حراست اور جعلی مقابلوں کے دوران شہید ہوئے۔ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم ہونے کے بعد سے اب تک 942 کشمیری فائرنگ، پیلٹ گنز اور آنسو گیس سے زخمی ہوئے۔

حریت رہنماؤں یاسین ملک، شبیر احمد شاہ، آسیہ اندرابی، مسرت عالم بٹ، جماعت اسلامی امیر ڈاکٹر عبدالحمید فیاض، ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن کے صدر میاں عبد القیوم، نعیم احمد خان سمیت ہزاروں افراد مقبوضہ کشمیر اور بھارت کی مختلف جیلوں میں غیرقانونی طور پر زیرحراست ہیں۔

بھارتی کرفیو کے باعث وادی کے بیشتر اضلاع میں معمولات زندگی متاثر ہے جبکہ موبائل اور انٹرنیٹ سروس بھی معطل ہے۔

بھارت نے 5 اگست 2019 کو مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرکے وادی میں کرفیو جیسا سماء پیدا کیا ہوا ہے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube