ہوم   > پاکستان

ڈونلڈٹرمپ صدارتی انتخابات کے بعد پاکستان کا دورہ کرینگے، وزیرخارجہ

SAMAA | - Posted: Feb 19, 2020 | Last Updated: 1 month ago
SAMAA |
Posted: Feb 19, 2020 | Last Updated: 1 month ago

جادوکی چھڑی ہوتی تومعیشت کوجلد ٹھیک کرتے، شاہ محمودقریشی

وزير خارجہ شاہ محمود قريشی کہتے ہيں اپوزيشن کا کام ہی جوڑ توڑ کرنا ہوتا ہے ليکن انہیں اپنے مقاصد حاصل کرنے ميں ناکامی ہوگی، ہم تمام چيلنجوں سے نمٹيں گے اور مدت پوری کريں گے، ڈونلڈ ٹرمپ امریکا کے صدارتی انتخابات کے بعد پاکستان کا دورہ کریں گے۔

سماء کے پروگرام نديم ملک لائيو ميں خصوصی گفتگو کرتے ہوئے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے حکومتی اقدامات کا دفاع کرتے ہوئے کہا کہ تحریک انصاف کو مشکل وقت میں حکومت ملی، بگڑی چیز کو درست کرنے میں وقت لگتا ہے، عرصہ دراز سے ملک کے معاشی حالات کو ٹھیک نہیں کیا گیا، معیشت دنیا بھر میں سست روی کا شکار ہے، الہٰ دین کا چراغ یا جادو کی چھڑی ہوتی تو معیشت کو جلد ٹھیک کرتے۔

ان کا کہنا ہے کہ مہنگائی کو کم کرنا بہت ضروری ہے، مہنگائی کم کرنے کیلئے اقدامات کرنا ہوں گے، وزیراعظم کی خواہش ہے کہ عوام پر مہنگائی کا بوجھ کم کیا جائے، مہنگائی اور شرح سود کے درمیان لنک ہوتا ہے، افراط زر کم ہونے سے شرح سود میں کمی آئے گی۔

اپوزیشن سے متعلق انہوں نے کہا حزب اختلاف کو جو توڑ جوڑ کرنا ہے وہ کریں گے، ممکن نہیں کہ اپوزیشن خاموشی سے بیٹھ جائے تاہم اپوزیشن کو مقاصد حاصل کرنے میں ناکامی ہوگی، حوصلہ رکھ کر حکومت کو کام کرنے دینا چاہئے۔

سابق وزیراعظم نواز شریف سے متعلق سوال کے جواب میں وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ نواز شریف کو بیرون ملک علاج کی اجازت عدالت نے دی۔

انہوں نے کہا کہ آٹے اور چینی بحران کے ذمہ داروں کا تعین ہوگا، وزیراعظم نے تحقیقات کا حکم دے دیا ہے، رپورٹ آنے کے بعد ذمہ داروں کو سامنے لایا جائے گا، حکومت کے احساس پروگرام کی بہت وسیع اہمیت ہے۔

وزیر خارجہ نے یہ بھی کہا کہ فضل الرحمان دھرنا دیکر دیکھ چکے، انہیں کچھ حاصل نہیں ہوا، ہم چیلنجز سے بھاگنے والے نہیں، مقابلہ کریں گے، پی ٹی آئی حکومت مدت پوری کرے گی، چوہدری پرویز الہیٰ اب ناراض نہیں، وزیراعظم اور آرمی چیف کے تعلقات بہترین ہیں۔

کراچی میں زہریلی گیس سے ہلاکتوں کے سوال پر ان کا کہنا تھا کہ زہریلی گیس سے متعلق تحقیقات ہورہی ہیں، رپورٹ کی روشنی میں ذمہ داروں کے خلاف کارروائی ہوگی۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ 24 فروری سے 2 روزہ دورے پر بھارت آرہے ہیں تاہم وہ پاکستان کا دورہ نہیں کریں گے۔

ندیم ملک کے اس حوالے سے سوال پر شاہ محمود قریشی نے بتایا کہ ڈونلڈ ٹرمپ نومبر میں امریکی صدارتی انتخابات کے بعد پاکستان آنے کا ارادہ رکھتے ہیں۔

وزیر خارجہ کو یقین ہے کہ سعودی عرب اور امریکا دونوں ایف اے ٹی ایف میں پاکستان کی حمایت کریں گے۔ ان کا کہنا ہے کہ امریکا اور سعودی عرب اس بات پر قائل ہیں کہ پاکستان نے سنجیدہ اور ٹھوس اقدامات اٹھائے ہیں۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ پاکستان افغان امن عمل میں مخلصانہ کردار ادا کررہا ہے، انہوں نے امید کا اظہار کیا کہ سیاسی عدم استحکام مذاکرات کیلئے نقصاندہ نہیں ہوگا۔

افغان الیکشن کمیشن نے 5 ماہ قبل ہونیوالے صدارتی انتخابات کے نتائج کا اعلان کرتے ہوئے موجودہ صدر اشرف غنی کو کامیاب قرار دیدیا، مخالف امیدوار عبداللہ عبداللہ نے نتائج کو مسترد کردیا۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
US, AFGHANISTAN, PAKISTAN, INDIA, KASHMIR, SHAH MEHMOOD, QURESHI, FATF, TERRORISM, MONEY LAUNDERING, TERROR FINANCING, PPP, PMLN
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube