ہوم   > پاکستان

کوئٹہ میں خودکش دھماکا، 8 افراد جاں بحق، متعدد زخمی

SAMAA | - Posted: Feb 17, 2020 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Feb 17, 2020 | Last Updated: 2 months ago

کوئٹہ کے علاقے شارع اقبال پر خود کش دھماکے میں 8 افراد جاں بحق اور 20 سے زائد زخمی ہوگئے، زخمیوں کو اسپتال منتقل کردیا گیا۔

کوئٹہ کے علاقے شارع اقبال پر مذہبی جماعت کی ریلی کے قریب خودکش دھماکے میں 8 افراد جاں بحق اور متعدد زخمی ہوگئے، زخمیوں کو اسپتال منتقل کردیا گیا۔ اسپتال انتظامیہ کے مطابق زخمیوں میں کئی کی حالت تشویشناک ہے، جنہیں ٹراما سیںٹر منتقل کردیا گیا ہے۔

سول اسپتال ترجمان نے تصدیق کی ہے کہ دھماکے میں جاں بحق 8 افراد کی لاشیں اسپتال لائی گئیں جبکہ متعدد زخمیوں کو طبی امداد دی جارہی ہے۔ زخمیوں اور جاں بحق افراد میں سیکیورٹی اہلکار بھی شامل ہیں۔

ڈی آئی جی پولیس عبدالرزاق چیمہ نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے 2 پولیس اہلکاروں اور ایک لیویز اہلکار سمیت 8 افراد شہید ہوگئے، خودکش حملہ آور نے مذہبی جماعت کی ریلی میں داخل ہونے کی کوشش کی، سیکیورٹی فورسز نے جانوں کا نذرانہ پیش کرکے قیمتی جانیں بچائیں۔

ایک سوال کے جواب میں ان کا کہنا تھا کہ پولیس، سی ٹی ڈی اور دیگر اداروں کی ٹیموں نے موقع سے شواہد اکٹھے کرکے تحقیقات شروع کردی ہیں۔

سیکیورٹی اہلکاروں کا کہنا ہے کہ کوئٹہ میں مذہبی جماعت کی ریلی کے موقع پر خود کش حملہ کیا گیا، ایک بمبار ریلی کی جانب بڑھا جسے روکنے کی کوشش کی گئی تو اس نے دھماکا کردیا۔

ریلی کی سیکیورٹی پر مامور ایک اہلکار نے بتایا کہ نو عمر لڑکا تھا جو بھاگ کر آرہا تھا، پولیس نے ریلی پر حملہ ناکام بنادیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ دھماکے میں کئی گاڑیوں اور موٹر سائیکلوں کو نقصان پہنچا جبکہ قریبی عمارتوں کے بھی شیشے ٹوٹ گئے۔

دھماکے کے بعد پولیس اور قانون نافذ کرنیوالے اداروں کے اہلکاروں نے علاقے کا محاصرہ کرلیا، بم ڈسپوزل اسکواڈ بھی طلب کرلیا گیا ہے، دھماکے کی نوعیت کا تاحال علم نہیں ہوسکا۔

وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے دھماکے کی مذمت کرتے ہوئے قیمتی جانی نقصان پر رنج و غم کا اظہار کیا اور کہا کہ بے گناہ شہریوں کو دہشت گردی کا نشانہ بنانے والے سخت ترین سزا کے مستحق ہیں،  دہشت گردی کی بزدلانہ کارروائی میں ملوث عناصر کو قانون کے کٹہرے میں لانے کیلئے تمام وسائل بروئے کار لائے جائیں گے۔

دوسری جانب انسپکٹر جنرل سندھ کلیم امام نے صوبہ بھر میں پولیس کو ہائی الرٹ رہنے کا حکم دیتے ہوئے کہا ہے کہ تمام پبلک مقامات، اہم سرکاری، نیم سرکاری عمارتوں، دفاتر، ریلوے اسٹیشنز، بس ٹرمینلز، ایئر پورٹس، حساس تنصیبات سمیت مساجد، امام بارگاہوں وغیرہ پر جملہ سیکیورٹی اقدامات کو مربوط اور مؤثر بنایا جائے۔

انہوں نے ہدایت کی کہ مختلف منتخب کردہ مقامات سمیت صوبے کے مضافات اور گنجان آباد علاقوں میں انٹیلی جنس اور کڑی نگرانی کے نظام کو مزید ٹھوس بنایا جائے، تمام ایس ایچ اوز کو علاقہ گشت، اسنیپ چیکنگ، پکٹنگ اور وجیلنس کے عمل کو اپنی نگرانی میں انجام دینے کا بھی حکم دیدیا۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
QUETTA, BLAST, BALOCHISTAN, TERRORISM, TERRORIST, SUICIDE BLAST
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube