ہوم   > پاکستان

کیماڑی واقعہ:کسٹم ہاؤس میں 4 افراد کی حالت خراب

SAMAA | - Posted: Feb 17, 2020 | Last Updated: 3 months ago
SAMAA |
Posted: Feb 17, 2020 | Last Updated: 3 months ago

کلیرنس کا عمل جاری

کراچی کسٹم ہاؤس کے چیف کلکٹر کا کہنا ہے کہ کسٹم ہاؤس میں زہریلی گیس سے 4 افراد کی حالت غیر ہونے پر اسے بند کردیا گیا ہے، جب کہ وفاقی وزیر علی زیدی کا کہنا ہے کہ کسٹم ہاؤس کھلا ہے۔

چیف کلکٹر کسٹمز واصف میمن کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ کسٹم ہاؤس کا خود کار کلئیرنس سسٹم بحال رکھا ہوا ہے، زہریلی گیس سے متعلق متعلقہ اتھارٹیز سے بات چیت کی ہے۔

انہوں نے کہا کہ اسٹاف کو فوری باہر نکالنے کی ہدایت جاری کی گئی، جس کے بعد کسٹم ہاؤس کی عمارت کو اسٹاف سے خالی کرواليا گیا ہے، ایمرجنسی کی ضرورت کسٹم ہاؤس کی 9 ویں منزل کے 4 اسٹاف ممبران کی حالت غیر ہونے پر نافذ کی گئی۔

واصف میمن کا مزید کہنا تھا کہ کسٹم ہاؤس کو خالی کردیا گیا ہے، سیکیورٹی کلیئرنس تک کراچی بندرگاہ سے متصل کسٹم ہاؤس بند رہے گا۔

واقعہ سے متعلق ترجمان کسٹم ہاؤس کا کہنا تھا کہ پیر کی صبح جب کسٹم ہاؤس کے ملازمین دفتر پہنچے تو انہیں سانس لینے میں دشواری پیش آئی، اسی دوران کئی ملازمین کو الٹیاں ہوئیں۔

علی حیدر زیدی کی تردید

وفاقی وزیر علی حیدر زیدی کا سماجی رابطے کی سائٹ ٹوئٹر پر اپنے بیان میں چیف کلکٹر کسٹم ہاؤس کے بیان کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ کسٹم ہاؤس کو بند نہیں کیا، کسٹم ہاؤس کھلا ہے، چیئرمین کراچی پورٹ ٹرسٹ آج جلد پریس کانفرنس میں پراسرار گیس پر حقائق سے آگاہ کریں گے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز کیماڑی کراچی میں مبینہ زہریلی گیس سے دو خواتین، ایک بچے سمیت چھ افراد جاں بحق ہوگئے جبکہ ایک سو بتیس افراد متاثر ہوئے۔ ضیا الدین اسپتال میں سو،کتیانہ میمن بائیس اور جناح اسپتال میں آٹھ افراد کو منتقل کیا گیا تھا۔

اسپتال انتظامیہ کا کہنا تھا کہ متاثرہ افراد کو سانس لینے میں دشواری اور پیٹ میں درد کی شکایت ہے۔ وزیراعلیٰ سندھ نے کمشنر کراچی سے واقعہ کی رپورٹ طلب کرلی ہے۔ ترجمان کے پی ٹی کا کہنا ہے کہ پورٹ پر کوئی ایسا جہاز نہیں لگا جس سے زہریلی گیس کی بو پھیلی ہو۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube