ہوم   > پاکستان

ویڈیو: ڈبہ پیر نے خود کو گڑھے میں بند کردیا

SAMAA | - Posted: Feb 13, 2020 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Feb 13, 2020 | Last Updated: 2 months ago

پولیس نے نکال کر جیل بھیج دیا

پنجاب کے ضلع سیالکوٹ میں جعلی پیر نے مریدوں میں اضافے اور عزت بڑھانے کے لئے خود کو گہرے گڑھے میں قید کرلیا۔ پولیس نے خندق سے نکال کر جیل کی ہوا کھلا دی۔

سیالکوٹ کے گاوں ونچل میں صغیر عرف مٹھے شاہ نامی ڈبہ پیر نے 40 روز کا چلہ کاٹنے کیلئے خود کو 6 فٹ گہرے گڑھے میں بند کر لیا۔ مریدوں نے مٹھے شاہ کو ڈھول بجا کر اور آشکبار آنکھوں سے رخصت کیا۔

پولیس نے 3 روز بعد گڑھے سے جعلی پیر کو مٹی اور لکڑی ہٹاکر باہر نکالا۔ مٹھے شاہ نے گڑھے میں بجلی، پانی، چار پائی اور اعلیٰ بستر کا انتظام کر رکھا تھا۔

ایس ایچ او طارق محمود نے بتایا کہ ونچل سے اطلاع آئی کہ ایک شخص صغیر عرف مٹھے شاہ نے خود کو قبر میں بند کر لیا ہے اور اس کے مرنے کا امکان ہے کیونکہ اس نے اوپر مٹی ڈلوا لی ہے۔

اطلاع پر وہاں پہنچے تو بہت سے لوگ وہاں جمع تھے۔ اس کو زمین سے باہر نکالا۔ اس نے اپنے آپ کو مٹی اور پھٹے لگا کر بند کیا ہوا تھا۔ اس کو باہر نکال کر پوچھا تو اس نے بتایا کہ اس طرح کرنے سے میری مریدوں میں شان و شوکت اور مریدوں میں اضافہ ہوگا۔

پولیس نے مقدمہ درج کرکے پیر کو جیل بھیج دیا ہے۔

سماء کی ٹیم ونچل گاوں پہنچی تو اس کے مریدوں نے انوکھی منطق بیان کردی۔ ایک مرید نے بتایا کہ پیر صاحب 41 دن کے چلے پر گئے تھے مگر 3 دن رہے تو پولیس والے انہیں زبردستی نکال کر لے گئے۔

مرید کا کہنا تھا کہ پیر صاحب خندق میں بیٹھ کر قرآن پاک ہی پڑھ رہے تھے۔ کون سا غلط کام کر رہے تھے۔ پولیس والوں نے اچھا کام نہیں کیا۔

اہل علم کا کہنا ہے کہ ایسے لوگ دین سے دور ہیں اور معصوم اور ان پڑھ لوگوں کو پیری فقیری کے نام پر دھوکا دے رہے ہیں۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube