Monday, October 25, 2021  | 18 Rabiulawal, 1443

فیس بک کا وزیراعظم حقیقت میں پاکستانی وزیراعظم بن گیا

SAMAA | - Posted: Feb 7, 2020 | Last Updated: 2 years ago
Posted: Feb 7, 2020 | Last Updated: 2 years ago

فوٹو: رحیم سنجوانی/سماء ڈیجیٹل

کراچی کے آرٹس کونسل میں منعقدہ ادب فیسٹیول 2020 کے تیسرے اور اختتامی روز ایک سیشن میں معاشرے پر ڈیجیٹل میڈیا کے اثرات پر توجہ دلائی گئی۔

گوگل اور فیس بک کے سابق کنسلٹنٹ بدر خوشنود نے اپنی گفتگو سے سیشن کا آغاز کیا اور کہا کہ ڈیجیٹل میڈیا بڑی حد تک ہر زاویئے سے معاشرے پر اثرانداز ہوا ہے۔

عمران خان جوکہ وزیراعظم بننے سے قبل سوشل میڈیا پر انتہائی مقبول تھے، انکی مثال دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اگر ہم اپنی ملکی سیاست کو دیکھیں تو ہمیں معلوم ہوتا ہے کہ فیس بک کا ’وزیراعظم‘ ہی حقیقت میں پاکستان کا اصل وزیراعظم بن گیا ہے۔ عمران خان کے وزیراعظم بننے سے قبل بیشتر ہیش ٹیگز کا استعمال کیا گیا۔

انہوں نے اس بڑھتے ڈیجیٹل میڈیا کو فری لانسرز میں اضافے کے ساتھ منسلک کیا۔ انہوں نے کہا کہ ہماری معیشت میں شراکت کےلیے ایک نئی کیٹیگری شامل ہوئی ہے۔ پچھلے سال ہمارے فری لانسرز نے غیرملکی ذخائر میں تقریبا 500 ملین ڈالر کا اضافہ کیا تھا۔ یہ بھی کہا کہ فری لانسرز سے متعلق پاکستان کا شمار پانچ بڑے ممالک میں شامل ہوتا ہے۔

بدر خوشنود نے کہا کہ صحت، تعلیم، ٹرانسپورٹ اور بینکاری نظام ڈیجیٹل میڈیا کے اثر و رسوخ کی موجودہ کی مثال ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ پہلے معلومات کی شروعات یکطرفہ ہوئی پھر یہ کام دوطرفہ طریقے سے ہونے لگا، لیکن اب ہم معلومات لینے اور دینے کےساتھ پیسے بھی کمانے لگے ہیں۔

انڈیپینڈنٹ اردو کے منیجنگ ڈائریکٹر ہارون رشید نے کہا کہ خبروں کا مواد ہمیشہ سے یکساں ہی رہا ہے البتہ اس کے پلیٹ فارمز بدل گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے معلومات کی فراہمی کےلیے ریڈیو کا استعمال صحیح انداز میں نہیں کیا اور افسوس یہ کہ ریڈیو صرف اب میوزک سننے کےلیے رہ گیا ہے۔

ہارون رشید نے بتایا کہ دنیا کس طرح ریڈیو کو خبروں کی معلومات اور تفریح کےلیے استعمال کر رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ دیگر ممالک ڈیجیٹل کا رخ کرنے کے باوجود ریڈیو کو اچھے انداز میں لے کر چل رہے ہیں۔ ڈیجیٹل میڈیا کی وجہ سے خبروں کے مواد کےلیے کوئی بھی منصوبہ ایک سے دو سال سے زیادہ نہیں چل سکتا۔

نیوز اور صحافت کے فرق کو واضح کرتے ہوئے ہارون رشید نے کہا کہ ڈیجیٹل میڈیا کی خوبصورتی اس کی شفافیت ہے۔ ہم تجزیات کی مدد سے اپنے مواد کا فیصلہ کر سکتے ہیں لیکن مواد کے سیاق و سباق کے سمجھنے کےلیے ہمیں صحافت کی مدد کی ضرورت ہوگی۔

ڈیجیٹل میڈیا کےلیے قواعد و ضوابط سے متعلق بات چیت کرتے ہوئے بدر خوشنود نے کہا کہ پیمرا کو یہ سمجھنے کی ضرورت ہے آپ لوگوں کو لکھنے اور بولنے سے روک نہیں سکتے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
Facebook, Pakistan PM, Karachi, Arts Council, Adab Festival 2020, Digital Media, radio
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube