ہوم   > پاکستان

کرونا وائرس: پختونخوا کے 5 اضلاع ہائی رسک پر

SAMAA | - Posted: Feb 4, 2020 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Feb 4, 2020 | Last Updated: 2 months ago

خیبر پختونخوا کے 5 اضلاع میں کرونا وائرس کے پھیلاؤ کے خدشات زیادہ ہیں جہاں چینی شہریوں کی آمد و رفت ہوتی رہتی ہے۔

ڈپٹی کمشنر بٹگرام الطاف حسین کے مطابق ان پانچ اضلاع میں کوہستان، شانگلہ، بت کڑہ، مانسہرہ اور ایبٹ آباد شامل ہیں۔

سماء ٹی وی کے پروگرام ’نیا دن‘ میں گفتگو کرتے ہوئے ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ ان پانچ اضلاع کے مختلف پروجیکٹس پر 108 چینی انجنیئرز کام کر رہے ہیں جن میں 20 افراد چین کے نئے سال کے تہوار پر اپنے ملک چلے گئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ضلع بٹگرام میں چینی شہریوں کے 5 کیمپ ہیں۔ ان کیمپوں میں مقیم کسی بھی چینی شہری میں تاحال کرونا وائس کے علامات ظاہر نہیں ہوئے مگر محکمہ صحت کے حکام کیمپ میں موجود چینی باشندوں کے ساتھ مسلسل رابطے میں ہیں۔

چین کے شہر ووہان سے پھیلنے والے کرونا وائرس سے اب تک 427 افراد ہلاک ہوچکے ہیں جبکہ 20 ہزار سے زائد افراد میں وائرس کی تصدیق ہوگئی ہے۔

وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کیلئے آسٹریلیا، امریکا، جاپان، روس، اٹلی، مالديپ اور فرانس نے چين کے ليے پروازیں بند کر رکھی ہيں جبکہ روس نے وائرس سے متاثر غير ملکيوں کو ملک بدر کرنے کا اعلان کرديا ہے۔

عالمی ادارہ صحت نے کرونا وائرس کے تیزی سے پھیلاؤ کے باعث عالمی سطح پر ’ہیلتھ ایمرجنسی نافذ کردی ہے مگر ساتھ ہی مشورہ دیا ہے کہ چین کے ساتھ بارڈرز بند کرنے کے بجائے ایئرپورٹس پر اسکریننگ کا عمل موثر بنایا جائے۔

عالمی ادارہ صحت کے مطابق آمد و رفت اور سرحد بند کرنے کے باعث لوگ غیرقانونی طریقے سے چین سے نکلنے کی کوشش کریں گے جس کے باعث ان کی اسکریننگ ممکن نہیں ہوگی اور اسی طرح کرونا وائرس مزید پھیل سکتا ہے۔

WhatsApp FaceBook
KP

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube