ہوم   > پاکستان

کرونا وائرس کی افواہ پھیلانے پر شہری کیخلاف مقدمہ درج

SAMAA | - Posted: Feb 4, 2020 | Last Updated: 4 months ago
SAMAA |
Posted: Feb 4, 2020 | Last Updated: 4 months ago

خیبر پختونخوا کے ضلع لوئر چترال میں کرونا وائرس کی جھوٹی افواہ پھیلانے پر شہری کے خلاف مقدمہ درج ہوگیا ہے۔

چترال کی تحصیل دروش کے ایڈیشنل اسٹنٹ کمشنر عبدالحق نے ڈپٹی کمشنر اور ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر کو مراسلہ لکھ کر آگاہ کیا کہ 3 فروری کو تحصیل ہیڈکوارٹر اسپتال دروش میں ایک چینی شہری کو علاج کی غرض سے لایا گیا تھا۔ چینی شہری مقامی ڈیم میں کام کرتا ہے اور اس کو پیٹ میں درد کی شکایت کی۔

ایڈیشنل اسٹنٹ کمشنر کے مطابق چینی شہری کو چیک اپ کے بعد ادویات دی گئی اور اب وہ مکمل طور پر صحت یاب ہوکر واپس کام پر لگ چکا ہے جبکہ وہ چین سے بھی اس وقت آیا تھا جب وہاں کرونا وائرس نہیں پھیلا تھا۔

مگر بعض لوگوں نے چینی شہری کو اسپتال میں دیکھ کر کرونا وائرس کی افواہیں پھیلانا شروع کردیں اور ان میں سے ارشاد نامی شخص نے بلا اجازت اسپتال کے احاطے میں چینی شہری کی تصویر کھینچی اور اس کو کرونا وائرس کا مریض بنا کر فیس بک پر شیئر کیا۔

ایڈیشنل اسٹنٹ کمشنر نے اپنے مراسلے کے ساتھ مذکورہ شخص کی فیس بک پوسٹ کا اسکرین شاٹ بھی منسلک کیا ہے۔

مراسلہ ملنے کے بعد ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر نے دروش تھانے کے ایس ایچ او کو ارشاد کے خلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم دیا جس پر دروش پولیس نے ارشاد کے خلاف ٹیلی گراف ایکٹ اور 16 ایم پی او کے تحت مقدمہ درج کرلیا ہے۔

ڈپٹی کمشنر چترال نوید احمد نے کہا ہے کہ ضلع میں کورونا کا کوئی کیس رپورٹ نہیں ہوا۔ جھوٹی سوشل میڈیا پر پوسٹ کی وجہ سے چترال کے شہریوں میں افراتفری پھیلی۔

انہوں نے کہا کہ کورونا وائرس سے سے بچاؤ کیلئے ہنگامی اقدامات کررہے ہیں مگر عوام میں جھوٹی خبر کے ذریعے افراتفری اور خوف پھیلانے والوں کے خلاف کارروائی کریں گے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube