Saturday, September 19, 2020  | 30 Muharram, 1442
ہوم   > پاکستان

بلوچستان کے بیشتر اضلاع میں شدید برفباری، ریسکیو آپریشن جاری

SAMAA | - Posted: Jan 14, 2020 | Last Updated: 8 months ago
SAMAA |
Posted: Jan 14, 2020 | Last Updated: 8 months ago

کوہلو اور گردونواح میں پندرہ سال بعد برفباری

کوئٹہ سمیت بلوچستان کے بیشتر اضلاع میں شدید برفباری کے بعد نظام زندگی مفلوج ہوکر رہ گیا جس کے باعث امدادی کاموں میں مشکلات کا سامنا ہے۔

کوئٹہ ائرپورٹ پر کئی پروازیں منسوخ کر دی گئیں جبکہ پی آئی اے کا طیارہ رن وے سے اتر گیا۔ کوہلو اور گردونواح میں پندرہ سال بعد برفباری ہوئی جبکہ زیارت میں پارہ منفی 6 اور کوئٹہ میں منفی 4 تک گر گیا۔

ضلعی حکام کے مطابق کان مہترزئی میں شدید برفباری کے باعث امدادی کاموں میں دشواری کا سامنا ہے تاہم کوئٹہ ژوب شاہراہ کان مہترزئی کے مقام پر گاڑیوں میں پھنسے تمام افراد کو ریسکیو کر لیا گیا ہے۔

بلوچستان میں بارش اور برفباری سے 22 افراد جاں بحق

لیویز کے مطابق سبی بولان روٹ تاحال سفر کے لئے بند ہے جبکہ کوئٹہ کراچی روٹ لک پاس پر چھوٹی گاڑیوں کی آؐمدورفت جاری ہے۔ چمن کوژک ٹاپ شاہراہ سے برف ہٹا کر ٹریفک بحال کر دی گئی۔ چمن سے کوئٹہ تک چھوٹی گاڑیوں کیلئے راستہ کھول دیا گیا ہے۔

ریسکیو کیے گئے افراد کو ایف سی قلعہ، لیویز لائن اور سرکٹ ہاؤس منتقل کر ديا گيا۔ متاثرہ افراد کو خوراک، ادویات، گرم ملبوسات اور کمبلوں کی فراہمی جاری ہے۔

چیف جسٹس بلوچستان ہائیکورٹ کے حکم پر وزیراعلیٰ بلوچستان ریسکیو اینڈ ریلیف آپریشن کی خود نگرانی کرتے رہے۔

ریسکیو اینڈ ریلیف آپریشن میں لیویز، ایف سی اور این ایچ اے اہلکاروں نے حصہ لیا۔ وزیراعلیٰ نے امدادی کارروائیوں میں حصہ لینے والے ارکان کی تعریف کی۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
Rescue operation, Quetta, Balochistan, snowfall, cold weather, Chaman
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube