ہوم   > پاکستان

نئےبھارتی آرمی چیف کے بیان پرپاکستان کاسخت جواب

SAMAA | - Posted: Jan 2, 2020 | Last Updated: 5 months ago
Posted: Jan 2, 2020 | Last Updated: 5 months ago

دفترخارجہ پاکستان نے بھارت کے نئے آرمی چیف کے بیان کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ کسی بھی جارحانہ بھارتی اقدام کا منہ توڑ جواب دیا جائے گا۔

دفتر خارجہ نے نئے بھارتی آرمی چیف جنرل منوج مکند نروانے کے بیان کومسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان کی تیاری اورعزم پر کسی کو شک نہیں ہونا چاہیے۔ بالاكوٹ میں بھارتی كارروائی كے نتیجے میں پاكستان كا رد عمل یاد رکھا جائے۔

بھارتی آرمی چیف کے بیان کے رد عمل میں دفترخارجہ کی جانب سے جاری کیے جانے والے بیان میں کہا گیا ہے کہ بھارتی بیانات فالس فلیگ کی طرف اشارہ کرتے ہیں، بھارت کے نئے آرمی چیف کا مقبوضہ کشمیر پر حملے کا بیان غیر ذمہ دارانہ ہے۔ بھارتی اشتعال انگیزیوں كے باوجود پاكستان خطے کے امن و سلامتی كیلئے كردار ادا كرتا رہے گا۔

ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں صورتحال کو معمول پر لانے کے دعوﺅں میں حقیقت نہیں ہے ۔ کشمیر میں لاک ڈاﺅن کو 150 دن ہوچکے ہیں۔ پاکستان عالمی فورمز پر کشمیریوں کی اخلاقی ، سیاسی اورسفارتی حمایت جاری رکھے گا ۔

بھارتی آرمی چیف نے کیا کہا؟

بھارت کے نئے آرمی چیف جنرل منوج مکند نراوا نے نے 31 دسمبرکو عہدہ سنبھالا پہلے ہی بیان میں پاکستان کو خبردار کرتے ہوئے کہا کہ بھارت سرحد پار دہشتگردی کے ٹھکانوں کو نشانہ بنانے کیلئے پری ایمپٹیو سرجیکل سٹرائیک یا پیشگی سرجیکل حملہ کرنے کا حق محفوظ رکھتا ہے۔

بھارتی آرمی چیف نے الزام عائد کیا کہ پاکستان دہشتگردی کو ریاستی پالیسی کے طور پر استعمال کر رہا ہے اور بھارت کیخلاف پراکسی جنگ جاری رکھے ہوئے ہے۔ کشمیر میں حالات تیزی سے معمول پر آرہے ہیں۔

جنرل منوج سابق آرمی چیف جنرل بپن راوت سے عہدے کا چارج لیا، اس سے قبل وہ وائس چیف آف آرمی سٹاف تھے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube