ہوم   >  پاکستان

اسلام آباد میں ایک برن سینٹرکاہوناتشویشناک ہے،قائمہ کمیٹی

SAMAA | - Posted: Dec 5, 2019 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Dec 5, 2019 | Last Updated: 2 months ago

File photo

سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے قومی صحت نے حکومت کو پمز اسپتال میں 26 سالہ ڈاکٹر کی موت کے معاملے کی انکوائری  کیلئے ایک ماہ کا وقت دے دیا۔ کمیٹی چئیرپرسن خوش بخت شجاعت نےکہا ہے کہ وفاقی دارالحکومت میں صرف ایک برن سینٹر ہونا تشویشناک ہے۔

سینیٹ کی قائمہ کمیٹی قومی صحت کے اجلاس میں  پمز کے برن سینٹر میں 26 سالہ ڈاکٹرعدنان محبوب کی موت پر بریفنگ دی گئی۔سینیٹر بہرہ مند تنگی نے پمز کے ڈاکٹرز کی بریفنگ مسترد کرتے ہوئے کہا کہ  وہ ان باتوں سے بالکل اتفاق نہیں کرتے،ڈاکٹرعدنان 4 گھنٹے پمز ایمرجنسی میں پڑا رہا لیکن کسی نےعلاج  شروع نہ کیا جس کے باعث مریض کی جان چلی گئی۔ کمیٹی چیئر پرسن خوش بخت شجاعت نے کہا کہ  وفاقی دارالحکومت میں ایک ہی برن سینٹر کا ہونا باعث تشویش ہے۔

معاون خصوصی  صحت ظفراللہ مرزا نے کہا کہ حکومت پمز واقعے کی شفاف اور غیرجانبدارزنہ انکوائری کرے گی۔انہوں نے بتایا کہ18ویں ترمیم کے باعث صحت کے شعبے کو کئی مسائل کا سامنا ہے۔ انھوں نےنظام کی بہتری کیلئے اصلاحات کو ناگزیر قرار دے دیا۔

 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

 
متعلقہ خبریں
 
 
 
 
 
 
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube