ہوم   > پاکستان

چھہ سالہ بچے کیخلاف مقدمہ،عدالت میں پیش

SAMAA | - Posted: Nov 26, 2019 | Last Updated: 3 months ago
SAMAA |
Posted: Nov 26, 2019 | Last Updated: 3 months ago

سیالکوٹ پولیس چھ سالہ بچے کو مقدمہ میں نامزد کر دیا گیا۔ چھ سالہ زین عبوری ضمانت کے لئے والدین کے ہمرہ عدالت پہنچ گیا۔ عدالت نے پولیس کو مقدمہ سے بچے کا نام خارج کرنے کا حکم دے دیا۔

سیالکوٹ میں کینٹ پولیس نے لڑائی جھگڑے کے معاملے پر پریپ کلاس کے طالب علم چھ سالہ زین علی پر مقدمہ درج کر دیا۔ بوتھ کے رہائشی زین علی کے والدین کی محلے کے عبدالستار نامی شخص سے تلخ کلامی ہوئی جس پر عبدالستار نے تھانہ کینٹ میں تشدد کی درخواست دے دی۔

پولیس نے زین کے والدین کے ساتھ اس کو بھی مقدمہ میں نامزد کردیا جس پر 6 سالہ زین علی عبوری ضمانت کے لئے اپنے والدین کے ہمراہ مقامی عدالت میں پہنچا۔ زین کی والدہ اس کو عدالتی احاطے میں گود میں اٹھائے پھرتی رہی اور اسی طرح جج کے سامنے پیش کیا۔

عدالت نے پولیس کو نوعمر بچے کا نام مقدمہ سے خارج کرنے کا حکم دے دیا جبکہ والدین کی عبوری ضمانت منظور کرلی

زین علی کے والدین کا کہنا ہے کہ مخالفین نے پولیس کے ساتھ ملی بگھت کر کے جھوٹا مقدمہ درج کروایا ہے اور چھ سالہ زین علی کو ایف آئی آر میں نامزد کرنے کا مقصد راستے پر قبضہ کرنے کے لئے دباؤ ڈالنا ہے۔

انہوں نے کہا کہ با اثر ملزمان راستے پر قبضہ کرکے تعمیرات کرنا چاہتے ہیں۔ ہم ان کی راہ میں رکاوٹ بن گئے جس کی وجہ سے انہوں نے ہمارے خلاف مقدمہ درج کروایا اور اس میں تشدد کے الزامات لگائے۔

سماء ڈیجیٹل کو موصول ہونے والی ایف آئی آر کی نقل میں مدعیان نے دعویٰ کیا ہے کہ خواتین نے گاڑی روک کر ہمیں اتارا اور تشدد کیا۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube