ہوم   >  پاکستان

فردوس عاشق اعوان توہین عدالت کیس کی کارروائی سےبچ گئیں

3 weeks ago

معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان توہین عدالت کیس کی کارروائی سے بچ گئیں۔اسلام آباد ہائيکورٹ نے ایکسل لوڈ قانون پرعملدرآمد سے متعلق توہين عدالت کی درخواست نمٹا دی۔

جمعرات کو عدالت عاليہ ميں فردوس عاشق اعوان کیخلاف توہین عدالت کی درخواست پر سماعت ہوئی۔ جسٹس مياں گل حسن اورنگزيب نے ريمارکس ديئے کہ عدالت اور انتظامیہ ایکسل لوڈ سے متعلق قانون کو معطل نہیں کرسکتیں، قانون کو اس کی روح کے مطابق عملدرآمد یقینی بنایاجائے،ایکسل لوڈ کے قانون سے متعلق عدالت تفصیلی فیصلہ دے گی۔

عدالت نے درخواست نمٹاتے ہوئے ایکسل لوڈ سے متعلق مرکزی کیس بھی ہدایت کے ساتھ نمٹا دیا۔

متعلقہ خبر: فردوس عاشق کیخلاف توہین عدالت کی دوسری درخواست سماعت کیلئےمقرر

وزيراعظم کی معاون خصوصي کے خلاف ايک اور توہین عدالت کیس کا فیصلہ محفوظ ہے جو  25 نومبر کو سنایا جائےگا۔

ایکسل لوڈ کا قانون یہ ہوتا ہے کہ ایم نائین موٹروے پر ایکسل لوڈ کتنا ہوگا۔ وزارت مواصلات نے یہ قانون ایک سال کے لیے معطل کردیا تھا۔لوڈ معطلی کا نوٹی فیکیشن اسلام آباد ہائی کورٹ میں معطل کردیا گیا تھا۔ اس کے بعد فرودس عاشق اعوان نے معطلی سے متعلق ٹویٹ کردیا تھا جس پر عدالت نے نوٹس لے لیا تھا۔ عدالت نے کہا کہ حکم کے برخلاف کوئی بات نہیں کی جائے ۔ نیشنل ہائی وے اتھارٹی کو بھی ہدایت کی گئی ہے کہ وہ قانون کے مطابق عمل درآمد کرے۔

 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

 
متعلقہ خبریں