Friday, September 18, 2020  | 29 Muharram, 1442
ہوم   > پاکستان

موبائل چھن جائےیاچوری ہوجائےتوکیاکریں؟

SAMAA | - Posted: Nov 5, 2019 | Last Updated: 11 months ago
SAMAA |
Posted: Nov 5, 2019 | Last Updated: 11 months ago

اگر آپ کا موبائل فون چوری ہوگیا ہے یاچھین لیا گیا ہے تو فوری طور پر شکایت درج کروائی جا سکتی ہے۔ ایسے موبائل فون کو 16 گھنٹوں کے اندر بلاک کروایا جاسکتا ہے۔

پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی (پی ٹی اے ) کی جانب سے جاری کیے جانے والے بیان کے مطابق چوری شدہ فونز کے ممکنہ غلط استعمال کی روک تھام کیلئے خدمات متعارف کرائی گئی ہیں۔

چھینے گئے یا چوری شدہ موبائل فون کی شکایت درج کروانے کیلئے شکایت کنندہ ہیلپ لائن ہر رابچی کرسکتا ہے، پی ٹی اے کو ای میل یا نزدیکی ترین زونل آفس جا کر بھی مدد لی جا سکتی ہے ۔

پی ٹی اے کی جانب سے جاری کردہ بیان کے مطابق سٹیزنزپولیس لائزن کمیٹی (سی پی ایل سی) کی ہیلپ لائن پر بھی ایسے موبائل فونز سے متعلق شکایت درج کروا کے انہیں بلاک کروایا جاسکتا ہے۔

شکایت درج کروانے والے کو متعلقہ پلیٹ فارم پر اپنے چوری شدہ یا چھینے گئے موبائل فون کا ’’آئی ایم ای آئیز‘‘ نمبر، موبائل فون کی برانڈ، ماڈل ، رنگ، چوری ہونے یا چھینے جانے کے وقوعہ کی تاریخ کے علاوہ نام ، پتہ، شناختی کارڈ نمبر فراہم کرنا ہوگا۔

اپنے فون کی موجودہ صورتحال کیسے معلوم کی جائے؟

اندراج شکایت کے16 گھنٹے بعد فون کی حیثیت کی جانچ کی جاسکتی ہے۔ ایس ایم ایس ، ویب سائٹ یا اینڈرائیڈ ایپلی کیشن (ڈی وی ایس) کے ذریعے آپ اپنے فون کا اسٹیٹس چیک کرسکتے ہیں۔

آپ کے موبائل فون آئی ایم ای آئی نمبر کا # 06 #* ڈائل کرکے معلوم کیا جاسکتا ہے۔ یہ نمبرموبائل ڈیوائس کی سیٹنگزمیں بھی موجود ہوتا ہے جبکہ ڈبے پر بھی درج ہوتا ہے۔

بیان میں یہ بھی واضح کیا گیا ہے کہ پی ٹی اے کا اختیار صرف فون بلاک کرنے تک محدود ہے۔ گمشدہ فون کو تلاش کرنے کیلئے پولیس سے رابطہ کرنا ہوگا۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
Mobile theft, PTA, CPLC , citizen police liasion committee, IMEI
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube