ہوم   >  پاکستان

ڈی آئی خان، کھلونا بم پھٹنے سے 3 بہن بھائی جاں بحق

SAMAA | - Posted: Oct 30, 2019 | Last Updated: 3 months ago
Posted: Oct 30, 2019 | Last Updated: 3 months ago

خیبر پختونخوا کے ضلع ڈیرہ اسماعیل خان میں کھلونا بم پھٹنے سے 3 بہن بھائی جاں بحق ہوگئے۔

ڈیرہ اسماعیل خان کے بم ڈپسوزل یونٹ کے انچارج عنایت اللہ ٹائیگر نے سماء ڈیجیٹل کو بتایا کہ واقعہ ڈیرہ اسماعیل خان کے نواحی علاقہ ’درابن خورد‘ میں پیش آیا جہاں صفدر اقبال نامی شخص کھیتوں میں مکئی کاٹ رہا تھا کہ اس کو ایک ’چھوٹا سا کھلونا‘ مل گیا، جس کو بم ڈسپوزل اسکواڈ کے لوگ ’جادوئی گرینیڈ‘ کہتے ہیں۔ اس گرینیڈ میں لیور نہیں ہوتا بلکہ سیفٹی گرپ اور اس کے ساتھ رنگ ہوتا ہے۔

عنایت اللہ ٹائیگر کے مطابق صدر اقبال نے اس کو اپنی موٹر سائیکل کے ہینڈل پر لگے ڈیکوریشن والے پھولوں کے ساتھ باندھ دیا اور جب گھر پہنچا تو اس کے بچے ’کھلونا‘ حاصل کرنے کیلئے آپس میں لڑنے لگے۔ بچوں کی کھینچا تانی کے دوران ‘کھلونے‘ کا رنگ اور سیفٹی گرپ موٹر سائیکل کے ساتھ رہ گئے جبکہ گرینیڈ بچوں کے ہاتھ میں پھٹ گیا۔

دھماکے میں ایک بچے کا ہاتھ بھی مکمل طور پر ضائع ہوگیا اور دو بچے موقع پر ہی دم توڑ گئے جبکہ بچی کو تشویشناک حالت میں اسپتال منتقل کیا گیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسی۔

جاں بحق بچوں میں صفدر اقبال کے دو بیٹے اور ایک بیٹی شامل ہے۔ بچوں کی عمریں پانچ سے نو سال کے درمیان ہیں۔

خیبر پختونخوا میں دہشت گردی کے خلاف جنگ کے دوران کھلونا بم کی زد میں آکر ہلاک ہونے والے بچوں کے اعداد و شمار دستیاب نہیں مگر ایسے بچوں کی تعداد سیکڑوں میں ہیں۔

کھلونا بموں کے زیادہ واقعات ضلع سوات، شمالی و جنوبی وزیرستان، بنوں، ڈیرہ اسماعیل خان، ٹانگ، خیبر، لکی مروت اور درہ آدم خیل میں رونما ہوئے۔

 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

 
متعلقہ خبریں
 
 
 
 
 
 
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube