ہوم   >  پاکستان

پاکستان میں فیس بک لائیو اسٹریم پر خودکشی کاپہلا واقعہ

1 month ago

بالائی سندھ کے علاقے گھوٹکی کے ایک نوجوان نے فیس بک کی براہ راست نشریات میں خود کشی کرلی، یہ پاکستان میں اس نوعیت کا پہلا واقعہ ہے۔

فیس بک نے ویب سائٹ سے خودکشی کی ویڈیو ہٹادی۔

پولیس نے خودکشی کرنیوالے نوجوان کی لاش میرپور ماتھیلو کے ڈسٹرکٹ اسپتال منتقل کردی۔

انتہائی قدم اٹھانے سے قبل نوجوان نے اپنے خاندان اور دوستوں کے نام سندھی میں ایک ویڈیو پیغام بھی جاری کیا، 6 منٹ طویل ویڈیو میں بار بار یہ کہتا سنائی دیا کہ وہ خودکشی کرنے جارہا ہے۔

نوجوان کا کہنا تھا کہ اسے محبت ہوگئی ہے مگر یہ کسی کام کی نہیں۔ اس نے روتے ہوئے مزید کہا کہ میں ایسا نہیں کرنا چاہتا، مجھے اس تکلیف سے نکلنے کا کوئی راستہ دکھائی نہیں دیتا۔

نوجوان نے اپنے دوستوں سے درخواست کی کہ اگر کوئی غلطی ہو گئی ہو تو مجھے معاف کردینا۔

فیس بک کے لائیو اسٹریمنگ فیچر کا 2016ء میں آغاز ہوا تھا، ویب سائٹ پر اکاؤنٹ رکھنے والے ہر شخص کو اس تک رسائی حاصل ہے، یہ فیچر نیوز فیڈ کے اوپری حصے میں موجود ڈراپ ڈاؤن مینیو پر لائیو ویڈیو کو منتخب کرکے استعمال کیا جاسکتا ہے، ویڈیو شوٹنگ سے قبل 3 سیکنڈ کا کاؤنٹ ڈاؤن شروع ہوتا ہے اور ویڈیو کو پبلک کئے جانے کی صورت میں قریبی دوستوں سمیت ہر شخص اسے دیکھ سکتا ہے، فیس بک لائیو کا دورانیہ 4 گھنٹے تک ہوسکتا ہے۔

کوئی بھی شخص کسی ویڈیو کے نامناسب ہونے پر اسے رپورٹ کرسکتا ہے، جس کیلئے پوسٹ کے اوپری حصے میں موجود اسکرول ڈاؤن مینیو پر کلک کرکے ’’رپورٹ پوسٹ‘‘ یا ’’رپورٹ فوٹو‘‘ کا انتخاب کرکے ہدایت پر عمل کرنا ہوگا۔

 
TOPICS:

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

 
متعلقہ خبریں
 
 
 
 
 
 
 
GHOTKI, SINDH, FACEBOOK, SUICIDE, LIVE STREAM,