ہوم   >  پاکستان

مسئلہ کشمیر پرحکومت کےکچھ نہ کرنے پرخود آگےبڑھیں گے، سراج

1 month ago

کشمیر جہاد کے بغیر آزاد نہیں ہوسکتا

جماعت اسلامی پاکستان کے امیر اور سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ کشمیر کے معاملے پر اگر حکومت نے کچھ نہ کیا تو ہم خود آگے بڑھیں گے کیونکہ کشمیر جہاد کے بغیر آزاد نہیں ہوسکتا۔

ایبٹ آباد میں آزادی کشمیر مارچ سے خطاب کرتے ہوئے امیر جماعت اسلامی نے کہا میں پاکستانی فوج سے کہنا چاہتا ہوں کہ اگر کشمیر کی لڑائی سری نگر میں نہ لڑی تو پاکستان کےلیے اسلام آباد میں لڑنا پڑے گی اس لیے اگر یہ آگے نہ بڑے تو ہم آگے بڑھ کر فیصلہ کریں گے۔

سراج الحق نے کہا کہ کراچی سے لے کر خیبر تک پوری قوم مودی سے مقابلہ کرنے کےلیے تیار ہے کیونکہ یہ ڈرنے والی نہیں۔ کشمیریوں نے 72 سالوں میں ہر طرح کی قربانی دی۔ ماؤں اور بہنوں نے اپنی عصمتوں کو قربان کیا لیکن آج مقبوضہ کشمیر میں 24 ہزار سے زیادہ نوجوان قید ہیں۔

انہوں نے کہا کہ کشمیریوں کے تحفظ کےلیے ملک بھر میں مارچ کیے جس سے اندازہ ہوا کہ قوم جہاد کےلیے تیار ہے۔ حکومت پاکستان سے مطالبہ کرتا ہوں کہ ایل او سی پر باڑ کو ختم کرے۔ کرفیو کو 77 روز ہوگئے حکومت پاکستان بتائے انہوں نے کیا کِیا؟

سراج الحق نے کہا کہ جواب ملتا ہے عمران خان نے اقوام متحدہ میں تقریر کی۔ تقریریں تو پہلے بھی بہت ہوئیں لیکن برہمن سماج جہاد کی زبان سمجھتا ہے۔ اقوام متحدہ سے آنے کے بعد ایل او سی پر جانے والوں پر غداری کا فتویٰ لگایا۔ بتایا جائے کس اسلامی ملک نے کشمیر پر پاکستان کا ساتھ دیا۔

انہوں نے کہا کہ ایل او سی پر لوگ شہد ہو رہے ہیں لیکن حکومت کچھ نہیں کرتی جس سے نوجوان مایوس ہو رہے ہیں۔ عمران خان ٹیپو سلطان بننا چاہتے ہیں تو آگے بڑھیں۔ ملک یاسین، آسیہ اندرابی کی آواز سنو ورنہ ہم آگے بڑھیں گے۔

امیر جماعت اسلامی کا کہنا تھا کہ کشمیر بچاو مارچ پاکستان بچاو مارچ ہے۔ اگر کشمیر بھارت کا حصہ بن گیا تو وہ لاہور کا رخ کریں گے۔ مودی نے اعلان کر رکھا ہے ستلج، راوی اور دیگر دریاوں کا ایک قطرہ پاکستان کو نہیں دیں گے۔ بھارت  نے پاکستان کی کمزور حکومت اور سیاسی انتشار کو دیکھ کر کشمیر کی حثیت کو تبدیل کیا۔

اس موقع پر صوبائی نائب امیر خیبر پختونخوا صابر حسین اعوان، ضلعی امیر ساجد قریش عباسی، سابق امیدوار قومی اسمبلی سعید مغل، سابق امیدوار صوبائی اسمبلی امجد خان جدون اور ضلعی امیر مانسہرہ ڈاکٹر طارق شیرازی نے بھی خطاب کیا۔

قبل ازیں فوارہ چوک سے شاہراہ قراقرم اور پنڈال تک ایک ریلی بھی نکالی گئی جس کی قیادت مرکزی امیر نے کی جس میں خواتین کی بھی بڑی تعداد موجود تھی۔

 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

 
متعلقہ خبریں
 
 
 
 
 
 
 
Siraj Ul Haq, Kashmir, Pakistan, India, Jamaat e Islami, Jihad