ہوم   >  پاکستان

حکومت سے کسی قسم کے مذاکرات نہیں ہونگے، فضل الرحمٰن

2 months ago

فوٹو: آن لائن

جے یو آئی کے سربراہ مولانا فضل الرحمٰن نے کہا ہے کہ مذکرات کے حوالے سے گردش کی جانے والے افواہوں میں کوئی صداقت نہیں کیونکہ حکومت سے کسی قسم کے مذاکرات نہیں ہوں گے۔

اس سے قبل جمعیت علمائے اسلام (ف) نے آزادی مارچ کے حوالے سے حکومتی کمیٹی سے آج ہونے والے مذاکرات منسوخ کر دیے ہیں۔ حکومت کے ساتھ مذاکرات کا حتمی فیصلہ اب اپوزيشن جماعتوں کی رہبر کمیٹی کرے گی۔ رہبر کمیٹی کو مذاکرات کا اختیار اپوزیشن رہنماؤں کی مشاورت سے دیا گیا۔

کمیٹی نے مولانا فضل الرحمٰن کی ہدايت پر اس حوالے سے اہم اجلاس کل 21 اکتوبر کو طلب کرليا ہے جوکہ اسلام آباد ميں رات 8 بجے اکرم خان درانی کی رہائش گاہ پر ہوگا۔

مردان میں میڈیا سے  گفتگو کے دوران مولانا فضل الرحمن نے کہا کہ حکومتی وزراء پریس کانفرنس میں مذاکرات کی بات کم اور دھکیاں زیادہ دے رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جس حکومت کا خود اپنی کوئی آئینی اور قانونی جواز نہ ہو وہ ہمیں آئین اور حقوق کی باتیں کیا سیکھائیں گے۔

سربراہ جمعیت علمائے اسلام نے کہا کے حکومت کے ساتھ مذاکرات کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔ ہم نے رہبر کمیٹی کا اجلاس طلب کیا ہے اس میں اپوزیشن کا جو متفقہ موقف سامنے آئے گا اس پر عمل درآمد کیا جائے گا۔

آزادی مارچ: حکومت سےمذاکرات کیلئےجےیوآئی کی ٹیم تیار

مولانا فضل الرحمٰن نے کہا کہ ہم گیدڑ بھبکیوں سے ڈرنے والے نہیں۔ ہمارا ماضی اس بات کا گواہ کے ہم نے ہمیشہ کلمہ حق بلند کیا ہے۔ جمعیت کی رضاکار تنظیم انصار الاسلام الیکشن کمیشن آف پاکستان سے باقائدہ رجسٹرڈ شدہ ہے اور جو حکومت رضاکاروں سے خوفزدہ ہو وہ مسلح تنظیموں کا کیا مقابلہ کرے گی۔

انہوں نے کہا کہ اپوزیشن ایک صفحے پر ہے اور 25 جولائی کے موقف پر سب جماعتیں اکھٹی ہیں۔ ہم نے کسی کو مجبور نہیں کیا لہٰذا جو جماعت جس حیثیت سے بھی ہمارے ساتھ مارچ میں شریک ہو ہمیں قبول ہے کیونکہ ہم سب کا ہدف ایک ہے۔

فضل الرحمٰن نے کہا کے ہم اداروں کے ساتھ تصادم پر یقین نہیں رکھتے لیکن بعض ریٹائرڈ لوگوں کو جواب دینے کا حق ضرور رکھتے ہے۔ خدا نخواستہ پاکستان پر کوئی مشکل وقت آیا تو انصار الاسلام کے ڈنڈا برادار سب سے پہلے محاز پر کھڑے ہوں گے۔

واضح رہے کہ اس سے قبل چیئرمین سینيٹ کے رابطہ کے بعد مولانا فضل الرحمٰن نے بھی سینیٹر مولانا عبدالغفور حیدری کی سربراہی ميں مذاکراتی کمیٹی تشکیل دی تھی تاہم جے یو آئی کے موقف میں تبدیلی کے بعد آج ہونے والے مذاکرات منسوخ ہوگئے۔

 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

 
متعلقہ خبریں
 
 
 
 
 
 
 
JUI-F, Azadi March, Rehbar Committee, PMLN, Fazal Ur Rehman, Islamabad