ہوم   >  پاکستان

جج ویڈیو کیس: ملزم فیصل شاہین کاویڈیو بنانے کا اعتراف

4 weeks ago

جج ویڈیو کیس میں اہم پیشرفت ہوئی ہے، ملزم فیصل شاہین نے جج ارشد ملک اور ناصر بٹ کی ویڈیو بنانے کا اعتراف کرلیا، مجسٹریٹ کے سامنے ریکارڈ کیا گیا بیان عدالت میں پیش کردیا گیا۔

احتساب عدالت کے جج کی مبینہ ویڈیو کا معاملہ رواں برس 6 جولائی کو سامنے آیا تھا جب کوٹ لکھپت جیل میں قید پاکستان کے سابق وزیراعظم نواز شریف کی بیٹی اور مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز دیگر سینئر رہنماؤں کے ہمراہ پریس کانفرنس کے دوران جج ارشد ملک کی مبینہ خفیہ ویڈیو سامنے لائی تھیں۔

ویڈیو سامنے آنے پر جج ارشد ملک نے ایک پریس ریلیز جاری کی تھی جس میں پریس کانفرنس کے دوران دکھائی جانے والی ویڈیو کو مفروضوں پر مبنی قرار دیتے ہوئے کہا تھا کہ یہ میری اور خاندان کی ساکھ متاثر کرنے کی کوشش ہے۔

جج ویڈیو کیس کی سماعت اسلام آباد کی مقامی عدالت میں ہوئی جہاں گرفتار ملزم فيصل شاہين نے جج ارشد ملک اور ناصر بٹ کی وڈیو بنانے کا اعتراف کرلیا، مجسٹریٹ کے سامنے ریکارڈ کرائے گئے اپنے بیان میں ان کا کہنا تھا کہ جج ارشد ملک اور ناصر بٹ کی ملاقات میں وڈیو میں نے بنائی، وڈیو بنانے میں ناصر بٹ نے سہولت کار کا کردار ادا کیا۔

ریکارڈ کیا گیا بیان عدالت میں جمع کرادیا گیا جس کے بعد مقامی عدالت نے ملزم فیصل شاہین کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا گیا  جبکہ شریک ملزم حمزہ بٹ کے جسمانی ریمانڈ میں بھی 3 دن کی توسیع کردی گئی۔

احتساب عدالت کے سابق جج ارشد ملک نے گزشتہ برس میاں نواز شریف کو العزیزیہ سٹیل ملز کے مقدمے میں 7 سال قید کی سزا سنائی تھی جبکہ فلیگ شپ ریفرنس میں انہیں بری کر دیا تھا، سابق جج ارشد ملک ڈیپیوٹیشن پر اسلام آباد کی احتساب عدالت بھیجے گئے تھے، جبکہ وہ لاہور ہائی کورٹ کے ماتحت ہیں۔

واضح رہے کہ اسلام آباد ہائیکورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ نے احتساب عدالت نمبر دو کے سابق جج ارشد ملک کو ان کے مس کنڈکٹ کی وجہ سے معطل کردیا تھا اور انہیں لاہور ہائیکورٹ میں رپورٹ کرنے کا حکم دیا تھا۔

رواں سال 7 ستمبر کو وفاقی دارالحکومت اسلام آباد کے جوڈیشل مجیسٹریٹ نے احتساب عدالت کے سابق جج ارشد ملک کے ویڈیو کیس میں وفاقی تحقیقاتی ادارے ایف آئی اے کی سفارش پر گرفتار کئے گئے تینوں ملزمان ناصر جنجوعہ، خرم یوسف اور غلام جیلانی کو بری کردیا تھا۔

 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

 
متعلقہ خبریں
 
 
 
 
 
 
 
NAB COURT, ISLAMABAD, CORRUPTION, NAWAZ SHARIF, PMLN, NASIR BUTT, FAISAL SHAHEEN