Sunday, September 19, 2021  | 11 Safar, 1443

پولیس کی ناقص تفتیش کے باعث قاتل بچ جاتے ہیں،عدالت

SAMAA | - Posted: Oct 10, 2019 | Last Updated: 2 years ago
SAMAA |
Posted: Oct 10, 2019 | Last Updated: 2 years ago

اسلام آباد ہائیکورٹ نے وفاقی پولیس کی کارکردگی پر سوالات اُٹھادیئے۔ قتل کیس ملزم کی ضمانت قبل ازگرفتاری کی درخواست پر سماعت کےدوران جسٹس عامر فاروق نے ریمارکس دیئےکہ اسلام آباد پولیس کی ناقص تفتیش کے باعث قتل کے ملزم بچ جاتے ہیں، صورتحال یہی رہی توتمام تفتیشی افسران کو معطل کرنے کا حکم جاری کردوں گا۔

جمعرات کو قتل کیس میں نامزد ملزم کی درخواستِ ضمانت قبل از گرفتاری پر سماعت ہوئی۔ تفتیشی افسر اسلام آباد ہائیکورٹ کے سوالوں کا جواب نہ دے سکا جس پرعدالت نے سخت اظہار برہمی کیا۔

ملزم قیصر محمود کی درخواست پرسماعت کے دوران جسٹس عامر فاروق نے سخت ریمارکس دئیے اور کہا کہ اسلام آباد پولیس کی ناقص تفتیش کے باعث قتل کےملزم بچ جاتے ہیں، صورتحال یہی رہی تو تمام تفتیشی افسران کو معطل کرنےکا حکم دوں گا، پولیس نے یہ وطیرہ برقرار رکھا توعوام کا اعتبارعدالت سے اٹھ جائے گا۔

سپریم کورٹ:20بارسزائے موت کا قیدی عدم ثبوت پربری

عدالتی حکم پر ڈی آئی جی پولیس اور ایس ایس پی اسلام آباد پیش ہوئے،عدالت نے دونوں افسران کی سرزنش کردی۔ جسٹس عامر فاروق نے کہا کہ تفتیشی افسر عدالت میں سوالات کا جواب نہیں دے سکتے، یہ اسلام آباد پولیس کی حالت ہے۔

وکیلِ صفائی حافظ صفیان کا کہنا تھا کہ ملزم ایف آئی آر میں نامزد ہے مگر واردات میں اُسکا کوئی کردار نہیں۔ عدالت نے دلائل سننے کے بعد ضمانت قبل از گرفتاری کی درخواست پر فیصلہ محفوظ کرلیا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube