Monday, December 6, 2021  | 30 Rabiulakhir, 1443

جہلم میں خواجہ سراؤں نے نوجوان کو قتل کر دیا

SAMAA | - Posted: Oct 9, 2019 | Last Updated: 2 years ago
SAMAA |
Posted: Oct 9, 2019 | Last Updated: 2 years ago

مقدمہ میں 4 افراد نامزد

جہلم کی تحصیل دینہ میں خواجہ سراؤں نے نوجوان کو قتل کر دیا۔ پولیس نے ایک ماہ بعد دو خواجہ سراؤں سمیت چار افراد کے خلاف مقدمہ درج کرلیا۔

جہلم میں دو خواجہ سراؤں کیخلاف نوجوان کے قتل کا مقدمہ درج کرلیا گیا۔ ایک ماہ قبل نوجوان وکیل دبئی سے واپس آتے ہوئے ملزم ’ارشد ملا‘ کا سامان لایا تھا جو ملزم نے اسلام آباد ایئرپورٹ پر اس سے وصول کیا۔

ملزم کو شک ہوا کہ اس کا سامان کم ہے جس پر دونوں میں جھگڑا ہوگیا۔ مشتعل ملزم نے اپنے خواجہ سرا بھائی اور اس کے ساتھی خواجہ سراؤں کے ساتھ مل کر وکیل کو قتل کرنے کا منصوبہ بنایا اور اسے اس وقت اغوا کرلیا جب وہ گھر والوں کے ساتھ جہلم جا رہا تھا اور بعد ازاں اسے قتل کرکے لاش ویرانے میں پھینک دی۔

ڈی پی او حماد عابد نے بتایا کہ وکیل کا ایک مہینہ پہلے قتل ہوا تھا جس پر اس وقت اہل خانہ نے کارروائی نہ کرنے کا کہا تھا لیکن ہم نے پھر بھی تمام میڈیکل فرانسک وغیرہ کروالیے تھے جس کی رپورٹس آنا ابھی باقی ہیں۔

ڈی پی او کے مطابق مقدمے میں چار افراد کو نامزد کیا گیا ہے جس میں دو خواجہ سرا بھی شامل ہیں۔ میرٹ پر تفتیش کریں گے۔ گناہ گاروں کے خلاف قانونی کارروائی ہوگی۔

ملزمان واردات کے بعد سے فرار ہیں۔ پولیس کا کہنا ہے ٹیم تشکیل دے دی ہے جلد پکڑے جائیں گے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube