Friday, January 22, 2021  | 7 Jamadilakhir, 1442
ہوم   > پاکستان

خواتین اہلکاروں کوہراساں کرنے پرمرد اہلکار ملازمت سے برطرف

SAMAA | - Posted: Sep 20, 2019 | Last Updated: 1 year ago
SAMAA |
Posted: Sep 20, 2019 | Last Updated: 1 year ago

آئی جی اسلام آباد نے خواتین اہلکاروں کو غیر اخلاقی پیغامات بھیجنے اور بلیک میل کرنے کے الزامات پر مرد اہلکار نبیل کو ملازمت سے برطرف کر دیا۔

لیڈی پولیس اہلکاروں کو ہراساں کرنے کے معاملے پر آئی جی اسلام آباد نے نوٹس لیا تھا۔

نبیل پر الزام ہے کہ وہ ساتھی لیڈی پولیس اہلکاروں کو غیراخلاقی پیغامات بھیجتا تھا۔ سی ٹی ڈی نے نبیل کو گرفتار کرکے اس کے زیرِ استعمال افغان نمبر والی سِم بھی برآمد کرلی۔

ملزم خواتین اہلکاروں کو بلیک میل کرکے دوسرے اہلکاروں کے نام پر ایزی لوڈ اور پیسے بھی طلب کرتا تھا۔

آئی جی اسلام آباد عامر ذوالفقار نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے نبیل کو ملازمت سے برخاست کر دیا ہے۔

آئی جی کا کہنا تھا کہ محکمے کی بدنامی کا باعث بننے والے ملازمین کی پولیس میں کوئی جگہ نہیں۔ ایسے اہلکاروں کےخلاف بلا تفریق کارروائی جاری رہے گی۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube